دبئی میں ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی پر اس ششماہی 4000 سے زائد گاڑیاں ضبط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

دبئی پولیس نے 2023 کی پہلی ششماہی کے دوران 4,172 گاڑیوں اور موٹر سائیکلوں کو ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر ضبط کیا ہے۔


اسی مدت کے دوران، 2022 کی ایگزیکٹو کونسل کی قرارداد نمبر (13) میں بیان کردہ تکنیکی تقاضوں پر عمل درآمد میں ناکامی پر کل 8,786 الیکٹرک سکوٹر اور سائیکلیں بھی ضبط کی گئیں۔


ان تقاضوں کا مقصد دبئی کو ایک سائیکل دوست شہر میں تبدیل کرنے کے لیے سائیکلوں کے استعمال کو منظم کرنا ہے۔

یہ رپورٹ رواں سال کی دوسری سہ ماہی کے لیے جنرل ڈیپارٹمنٹ آف ٹریفک کی کارکردگی کا جائزہ اجلاس کے دوران سامنے آئی، جس کی صدارت دبئی پولیس کے کمانڈر انچیف لیفٹیننٹ جنرل عبداللہ خلیفہ المری نے کی۔

لیفٹیننٹ جنرل المری نے فی 100,000 آبادی پر ٹریفک اموات کی شرح کو کم کرنے کے اسٹریٹجک مقاصد کے مطابق ٹریفک کے انتظام اور سڑکوں پر عوامی تحفظ کو بڑھانے میں ٹریفک کے جنرل ڈیپارٹمنٹ کے اہم کردار پر زور دیا۔

پچھلے مہینے، یو اے ای کی وزارت داخلہ نے 2022 کے لیے روڈ سیفٹی کے اعدادوشمار جاری کیے، جن میں انکشاف کیا گیا کہ ملک بھر میں گذشتہ سال ٹریفک حادثات میں 343 ہلاکتیں ہوئیں جو کہ 2021 کے مقابلے میں 10 فیصد کم ہیں۔ 2021 میں سڑک پر حادثات سے 381 اموات ہوئیں۔

تاہم، سنگین ٹریفک واقعات کی تعداد میں مجموعی طور پر اضافہ ہوا، رپورٹ کے مطابق 2022 میں 3,945 'بڑے' حادثات ہوئے جو کہ 2021 (3,488) کے مقابلے میں 13 فیصد اضافہ ہے۔

سڑک حادثات سے متعلق زخمیوں کی تعداد میں بھی اضافہ ہوا۔ پچھلے سال 5,045 افراد زخمی ہوئے، جبکہ 2021 میں یہ تعداد 4,377 تھی۔

رپورٹ میں پتا چلا کہ 30 سال سے کم عمر کے نوجوان ٹریفک حادثات سے سب سے زیادہ متاثر ہوتے ہیں، گذشتہ سال حادثات میں 41 فیصد اموات اور زخمی ہونے والوں میں 53 فیصد نوجوان تھے۔

اچانک مڑنا، توجہ کے بغیر گاڑی چلانا، ٹیلگیٹنگ، ممنوعہ اشیاء کے زیر اثر گاڑی چلانا، لاپرواہی اور عدم توجہی، سرخ بتی کی خلاف ورزیوں کے ساتھ ساتھ، بغیر چیک کیے سڑک میں داخل ہونا، لین کا خیال نہ رکھنا وغیرہ 2022 میں ٹریفک کی اہم خلاف ورزیاں تھیں۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ گذشتہ سال ٹریفک حادثات سے ابوظہبی میں 127 ہلاکتیں اور 1,756 زخمی ہوئے۔ دبئی میں 120 اموات اور 2,161 زخمی، راس الخیمہ میں 34 ہلاکتیں اور 411 زخمی، شارجہ میں 33 ہلاکتیں اور 320 زخمی، عجمان میں 13 ہلاکتیں اور 166 زخمی، ام القوین میں 12 جاں بحق اور 46 زخمی اور فجیرہ میں 4 افراد جاں بحق اور 185 زخمی ہوئے۔

بڑے حادثات میں ہلکی گاڑیاں (66 فیصد)، موٹر سائیکل (16 فیصد)، بسیں (7 فیصد) اور بھاری مال بردار گاڑیاں (پانچ فیصد) استعمال ہوئیں۔

رپورٹ میں بتایا گیا کہ شام کا وقت سڑک پر چلنے کے لیے سب سے خطرناک وقت ہوتا ہے، جب 37 فیصد اموات اور 40 فیصد زخمی ریکارڈ کیے گئے۔

دبئی پولیس نے عوام پر زور دیا ہے کہ وہ ٹریفک قوانین کی خلاف ورزی کرنے والے کسی بھی واقعے کی اطلاع دیں اور امارات میں ذمہ دارانہ ڈرائیونگ کا کلچر پیدا کرنے میں اپنا حصہ ڈالیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں