سعودی عرب: اسمگلنگ کے ارادے سے منشیات رکھنے والے شہری کو 13 سال قید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے پبلک پراسیکیوشن کے ایک سرکاری ذریعے نے بتایا ہے کہ نارکوٹکس پراسیکیوشن نے اسمگلنگ اور کاروبار کے قصد سے منشیات اور سائیکو ٹراپک اشیاء رکھنے کے الزام میں ایک شہری سے تفتیشی عمل مکمل کر لیا ہے۔

تفتیشی طریقہ کار سے یہ بات سامنے آئی کہ ملزم کے گھر میں نشہ آور ادویات اور سائیکو ٹراپک مواد موجود تھا، جب اس کی تلاشی لی گئی تو اس کے پاس سے 25 گولیاں سائیکو ٹراپک اور 40 گرام سے زائد چرس برآمد ہوئی۔ اس نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ان کا کاروبارشروع کیا تھا۔

اسے گرفتار کر کے مجاز عدالت میں پیش کیا گیا۔ اس کےخلاف عدالت میں ثبوت پیش کیے گئے۔ عدالت نے ٹھوس شواہد کی بنیاد پر اس کے خلاف ایک فیصلہ جاری کیا گیا جس میں اسے 13 سال قید اور50,000 ہزار ریال جرمانہ کی سزا سنائی گئی۔ قید کی سزا پوری ہونے کے بعد اسے بیرون ملک سفر کرنے پر پابندی عاید کی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں