سعودی اوقاف نے ایک ارب ریال کے مقدمات جیت لئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب میں اوقاف کی جنرل اتھارٹی نے اوقاف کے تحفظ کے لیے اوقاف کے متعدد مقدمات جیت لئے ہیں۔ اوقاف کے حق میں آنے والے ان فیصلوں سے اوقاف کو تقریباً ایک ارب ریال مالیت کے اثاثے اور مالی معاوضے حاصل ہو جائیں گے۔

ان مقدمات میں ایک وہ مقدمہ بھی ہے ایک گروہ نے سعودی محکمہ اوقاف کے خلاف مقدمہ دائر کیا تھا اور کہا تھا کہ زیر نظر جائیداد سو سال سے زیادہ عرصہ سے قائم ہے۔ تاہم عدالت نے اس گروہ کا موقف مسترد کردیا۔ اس جائیداد کی مالیت 300 ملین ریال ہے اور اب اسے اللہ کے لیے وقف کردیا گیا ہے۔

اسی تناظر میں کمیشن مکہ مکرمہ کے علاقے میں اوقافی جائیدادوں میں سے ایک کی فروخت کو کالعدم قرار دینے میں کامیاب ہو گیا کیونکہ کمیشن نے ایک ایسے خریدار کے خلاف مقدمہ شروع کیا جس نے ایک جائیداد کئی سال قبل خریدی تھی۔ اس کا کم قیمت یعنی صرف 1700 ریال پر تخمینہ لگایا گیا تھا۔ یہ جائیداد ضروری تصدیق کے بغیر فروخت کی گئی تھی۔ اس مقدمہ میں پرانی خرید و فروخت کو کالعدم قرار دے دیا گیا۔ اس جائیداد کی مالیت کا تخمینہ 66 ملین ریال لگایا گیا۔ عوامی فائدہ کے لیے اس جائیداد کی ضبطی کا حکم دے دیا گیا۔

اسی طرح وقف اتھارٹی ایک وقف برقرار رکھنے میں کامیاب رہی۔ اس معاملہ میں ایک فرد کی طرف سے مقدمہ دائر کیا گیا تھا اور جائیداد کی اوقافی ملکیت کو منسوخ کرنے کا مطالبہ کیا گیا تھا۔ اس جائیداد کا رقبہ 10 لاکھ مربع میٹر سے زیادہ ہے۔ اس شخص نے دعویٰ کیا تھا کہ یہ رقبہ اس کی ملکیت ہے تاہم عدالت نے وقف کے حق میں فیصلہ سنا دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں