مصر میں لڑائی جھگڑے کے واقعے کے بعد افواہوں کا بازار گرم، واقعہ کیا ہے؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصر کےشہر اسکندریہ کے مغرب میں مطروح شہر میں ہونے والی لڑائی کی تصویریں اور ویڈیو کلپس سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد اس حوالے سے شہریوں میں افواہیں اور چہ مے گوئیاں شروع ہوگئی ہیں۔

بعض شہریوں نے دعویٰ کیا کہ یہ سیاسی احتجاج تھا جس کے دوران لوگ آپس میں لڑ پڑے اور پرتشدد جھگڑا ہوا۔ جھگڑےکو ختم کرنے کے لیےپولیس کو مداخلت کرنا پڑی۔

مصری وزارت داخلہ نے ’ایکس‘ پلیٹ فارم (سابقہ ٹویٹر) پر اپنے اکاؤنٹ پر ایک مختصر بیان میں اس بات کی تصدیق کی کہ اس "جھگڑے" میں ملوث افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

انہوں نے مزید تفصیلات فراہم کیے بغیر یہ بھی بتایا کہ اس کی وجہ کل پیر کے روز مطروح شہر میں "لیبیائی شاعروں" کے ساتھ تصویر کشی کا مقابلہ تھا۔

یہ واقعہ مصری صدر عبدالفتاح السیسی کی جانب سے دسمبر میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں تیسری مدت کے لیے امیدوار بننے کے اعلان کے بعد سامنے آیا ہے۔

السیسی جنہوں نے 2014 اور 2018 میں صدارتی انتخابات 97 فیصد ووٹوں کے ساتھ کامیابی حاصل کی تھی کو مصر کے عوامی حلقوں میں اب بھی وسیع حمایت حاصل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں