یہودی آباد کاروں کی فول پروف سکیورٹی کے لیے نابلس میں اسرائیلی فوج کا دھاوا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سیکڑوں آباد کاروں کے داخلے کے منصوبے کے ایک حصے کے طور پر درجنوں اسرائیلی فوجی گاڑیوں نے بدھ کے روز نابلس شہر پر دھاوا بول دیا۔

دھاوے کی کارروائی

عینی شاہدین نے وضاحت کی کہ اسرائیلی فوجی درجنوں فوجی گاڑیوں کے ساتھ شہر میں داخل ہوئے۔ یہ شہر کے مشرق میں مذہبی رسومات کے مقصد سے سینکڑوں آباد کاروں کے لیے ایک منصوبہ بند دھاوے کی کارروائی کا حصہ ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ طوفانی دھاوے کا مرکز شہر کے مشرقی حصے میں فلسطینیوں کو روکنا تھا۔ قابض فوج کے دھاوے کے بعد نوجوانوں اور اسرائیلی فوجیوں کے درمیان جھڑپیں شروع ہو گئیں۔

نابلس میں ہلال احمر نے اطلاع دی ہے کہ ایک شہری سر میں گیس کا شیل لگنے سے زخمی ہوگیا جب کہ آنسوگیس کی شیلنگ سے 70 فلسطینی دم گھٹنے سے متاثر ہوئے۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ یہودی ہفتے سے مذہبی رسومات منا رہے ہیں۔ ان رسومات کی ادائی کے دوران اسرائیلی فوج کی بھاری نفری نے نابلس اور دوسرے مقامات پر دھاوے بولے اور آباد کاروں کے گروپوں کو فول پروف سکیورٹی فراہم کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں