بینک آف اسرائیل کا پہلی بار 30ارب ڈالر غیر ملکی کرنسی اوپن مارکیٹ میں فروخت کا اعلان

صورتحال اور مارکیٹس کا جائزہ لیتے رہیں گے، تمام دستیاب طریقہ عمل کے ساتھ کام کریں گے: بینک آف اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بینک آف اسرائیل نے 30 ارب ڈالر غیر ملکی کرنسی اوپن مارکیٹ میں بیچنے کا اعلان کر دیا۔ غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق حماس اور اسرائیل کے درمیان لڑائی کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال کے نتیجے میں بینک آف اسرائیل نے پہلی بار 30 بلین ڈالرغیر ملکی کرنسی اوپن مارکیٹ میں بیچنے کا اعلان کیا ہے۔

بینک آف اسرائیل کا کہنا ہے کہ صورتحال اور مارکیٹس کا جائزہ لیتے رہیں گے اور صورتحال کے مطابق تمام دستیاب طریقہ عمل کے ساتھ کام کریں گے۔ بینک آف اسرائیل نے کہا کہ سوئپ میکنیزم کے ذیعے مارکیٹ میں 15بلین ڈالر تک لیکویڈٹی فراہم کریں گے۔

غیر ملکی خبررساں ایجنسی کے مطابق بینک آف اسرائیل کے اعلان سے قبل اسرائیلی کرنسی کی قدر ساڑھے7سال کی کم ترین سطح پر ریکارڈ کی گئی جبکہ بینک آف اسرائیل کایہ اقدام حماس کے حملوں کے دوران کرنسی کی گرتی قدر سنبھالنے کے لیے ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں