فلسطینی عسکریت پسندوں کے ہاتھوں یرغمال مسکراتی بوڑھی خاتون کو پوتی نے پہچان لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

گذشتہ ہفتے کو حماس کے جنگجوؤں نے سرحد عبور کرکے اسرائیلی بستیوں سے درجنوں لوگوں کو اغوا کرلیا تھا۔ اغوا ہونے والوں میں ایک معمر یہودی خاتون بھی شامل ہیں جنہیں عسکریت پسندوں کے ہاتھوں یرغمال دیکھا جا سکتا ہے۔

قید کی گئی بزرگ اسرائیلی خاتون کی ایک ویڈیو سامنے آئی ہے جس میں اسے حراست کے دوران پرسکون اور مسکراتے دیکھا جا سکتا ہے۔

دوسری طرف معمر خاتون کی پوتی"ادوا آدر" نے اپنے فیس بک اکاؤنٹ پر کل اتوار کو ایک تبصرہ پوسٹ کیا جس میں انکشاف کیا گیا کہ اس کی دادی کی عمر 85 سال ہے۔ ان کا نام "یافا آدار" ہے اور اسے غزہ کے قریب ’کیبوٹیز نیرعوز‘ کے مقام سے پکڑ کر غزہ کے اندر لے جایا گیا۔

اس کا کہنا ہے کہ فلسطینیوں کے حملوں کے بعد ان کے بہت سے عزیزوں کے ساتھ رابطے منقطع ہوگئے تھے۔ ان میں اس کی دادی بھی شامل تھی۔ بعد میں سوشل میڈیا پر پتا چلا کہ ان کی دادی کو یرغمال بنا لیا گیا ہے۔

خاتون کی پوتی نے اپنی دادی کے بارے میں کہا کہ اس کا خاندان اس کے بارے میں کچھ نہیں جانتا تھا۔ ہفتے کی صبح سے اس سے رابطہ منقطع ہو گیا تھا تاہم ویڈیو کلپ میں اسے یرغمال بنا کر غزہ لے جاتے دیکھا گیا۔ ادرا نےکہا کہ دادی کا یرغمال بنائے جانا ہمارے لیے ڈراؤنا خواب ہے۔ ہم نے کبھی سوچا بھی نہیں تھا کہ ایسا کچھ ہو سکتا ہے"۔

آخری بار رابطہ

اس نے یہ بھی انکشاف کیا کہ بوڑھی عورت نے اپنی آخری کال میں کہا کہ "اس نے گولیوں کی آوازیں اور لوگوں کو عربی میں چیختے ہوئے سنا۔"

نوجوان اسرائیلی خاتون نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ "میں سوچ بھی نہیں سکتی کہ میں کتنی خوفزدہ ہوں۔ میری دادی 85 سال کی ہے، بیمار ہے اور اس کے پاس دوا نہیں ہے"۔

اس نے لکھا کہ "وہ بے قصور ہے، اس نے کوئی غلط کام نہیں کیا ہے۔ اغوا کیے گئے بچوں، شیر خواروں مردوں اور عورتوں کا کوئی قصور نہیں۔ انہیں بحفاظت واپس کیا جانا چاہیے۔ مجھے صرف امید ہے کہ حماس ان پر رحم کرے گی اور انہیں محفوظ رکھے گی"۔

سوشل میڈیا پر حماس کے وفاداروں کی طرف سے پوسٹ کیے گئے ادار کے ویڈیو کلپس کے پھیلنے کے بعد خاندان کو خاتون کے اغوا کا پتا چلا۔ بزرگ خاتون کو ایک چھوٹی "گالف" کار میں سوار دکھایا گیا۔ وہ مسکرا رہی تھی جیسے کچھ ہوا ہی نہیں۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ حماس نے گذشتہ ہفتے کے روز اسرائیلی بستیوں سے جن اسرائیلی اور غیر ملکی قیدیوں کو لیا، ان کی تعداد 100 سے زائد تھی، جو اسرائیلی حکومت نے کل، اتوار کو بتائی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں