ہم نے اسرائیلی فوجیوں کو اغوا کرنے کے لیے پیشگی تربیت دی تھی: اسلامی جہاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فلسطینی عسکری تنظیم اسلامی جہاد نے کہا ہے کہ اس نے اپنے جنگجوؤں کو اسرائیلی فوجیوں کے اغواء کی پیشگی تربیت دی تھی۔

حالیہ فوجی کارروائی کےدوران یرغمال بنائے گئے اسرائیلیوں کے حوالے سے اسلامی جہاد نے کہا ہے کہ جلد یا بدیر تل ابیب تمام فلسطینی قیدیوں کو رہا کرنے پر مجبور ہو جائے گا۔

اسلامی جہاد کے ڈپٹی سیکرٹری جنرل محمد الہندی نے کہا کہ "اسرائیل بعد میں قیدیوں کے تبادلے کا معاہدہ کرنے پر مجبور ہو گا جس کے نتیجے میں اسرائیلی جیلوں میں قید تمام فلسطینی قیدیوں کو رہا کیا جائے گا۔"

انہوں نے انکشاف کیا کہ اسلامی جہاد نے اسرائیلی فوجیوں کو اغوا کرنے کے لیے پیشگی تربیت اور تیاری کی تھی۔ انہوں نے عرب ورلڈ نیوز ایجنسی کو انٹرویو دیتے ہوئے مزید کہا کہ "اسرائیل کے اندر اب لڑائی ہو رہی ہے، جب کہ اسرائیل غزہ کی پٹی میں نہتے شہریوں پر بمباری کررہا ہے۔

انہوں نے زور دیا کہ اس جنگ کا مستقبل ابھی بھی طویل ہے۔ اسرائیل کی ریاست کے خاتمے کے ساتھ تنازع ختم ہو سکتا ہے۔

الہندی نے مزید کہا کہ "ہم اس جنگ کو جاری رکھنے کے لیے پوری قوت اور پوری تیاری رکھتے ہیں۔ ہم اپنی سرزمین کا دفاع کر رہے ہیں"۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں