جنوبی لبنان سے مارٹر سے گولہ باری، 3 اسرائیلی فوجی زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

7 اکتوبر کو غزہ میں شروع ہونے والی لڑائی کے بعد سے لبنان اسرائیل سرحد پر جاری کشیدگی کے تناظر میں دونوں ممالک کے درمیان ایک بار پھر جھڑپیں شروع ہو گئی ہیں۔

العربیہ اورالحدث کے نامہ نگار نے منگل کے روز اطلاع دی ہے کہ جنوبی لبنان سے اسرائیل میں یہودی بستی کی طرف مارٹر گولے داغے گئے جس سے 3 اسرائیلی فوجی زخمی ہو گئے۔

پرتشدد رات

گذشتہ روز جنوبی لبنان کی سرحد پر حزب اللہ اور اسرائیلی فوج کے درمیان جھڑپوں کی ایک پرتشدد رات گذری۔ کشیدگی آج صبح تک جاری رہی، جس کے نتیجے میں الضہیرہ قصبے میں گھروں کو براہ راست بمباری کا نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں متعدد افراد ہلاک ہوئے۔

دریں اثنا ایمبولینس اور شہری دفاع کی ٹیموں نے زخمیوں کو جنوب میں صور کے ہسپتالوں تک منتقل کیا۔

فاسفورس بم

راس ناقورہ تک کے علاقے کا آسمان بھی فلیش بموں سے ڈھک گیا۔

اسرائیلی فورسز نے ناقورہ کے قریب الضہیرہ، کفرلا، العدیسہ، المطلو، العرقوب، عیتا الشعب اور اللبونہ قصبوں پر درجنوں فاسفورس اور آتش گیر والے بم گرائے گئے۔ اس بمباری کے دوران بڑی تعداد میں جاسوس ڈرون طیاروں کی اس علاقے میں بڑے پیمانے پر پروازیں بھی دیکھی گئیں۔

دریں اثنا اسرائیلی فوج نے آج ایک بیان میں اعلان کیا کہ"لبنان سے حفاظتی باڑ میں دراندازی کرنے اور دھماکہ خیز ڈیوائس نصب کرنے کی کوشش کرنے والے چار جنگجو مارے گئے۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں