غزہ، ہسپتال پر براہ راست بمباری کا ذمہ دار امریکہ ہے: اسماعیل ہنیہ

اسرائیل کے خلاف احتجاج کی فلسطینیوں، عربوں اور مسلمانوں سے اپیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

حماس کے قائد اسماعیل ہنیہ نے غزہ کے ایک اور ہسپتال کو ٹارگٹ کر کے کی گئی اسرائیلی بمباری کا ذمہ دار براہ راست امریکہ کو قرار دیا ہے۔

ہسپتال پر بمباری کے نتیجے میں پانچ سو سے زائد فلسطینی زخمی جبکہ درجنوں دیگر مریض اور تیمارداروں کے علاوہ ہسپتال کے ڈاکٹروں اور دوسرے طبی عملے سمیت شہید ہو گئے ہیں۔

اس افسوسناک واقعے پر اسماعیل ہنیہ نے اپنی ایک ٹیلی کاسٹ کی گئی تقریر میں تبصرہ کرتے ہوئے امریکہ کو اس کا ذمہ دار کہا ۔ ان کا کہنا تھا کہ یہ امریکہ ہے جس نے اسرائیل کو پوری طرح سہارا اور تحفظ دے رکھا ہے۔ اس وجہ سے وہ اندھا دھند کبھی گھروں،مسجدوں، سکولوں پر اور کبھی ہسپتالوں پر بھی بمباری کر رہا ہے۔

اسماعیل ہنیہ نے کہا ہسپتال میں ڈاکٹروں اور مریضوں کو نشانہ بنا کر فلسطینیوں کے اس قتل عام کی اسرائیلی کارروائی سے صاف نظر آرہا ہے کہ ہمارا دشمن درحقیقت اپنی شکست دیکھ چکا ہے اور بوکھلا کر ایسا کر رہا ہے۔

ہنیہ نے اپنے عرب بھائیوں کے علاوہ دنیا بھر کے مسلمانوں اور ایک ایک فلسطینی سے اپیل کی ہے کہ وہ فلسطین پر اسرائیلی قبضے کے خلاف اٹھ کھڑے ہوں اور اسرائیل کے خلاف احتجاج میں شامل ہو۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں