شام میں دو امریکی فوجی اڈوں پر ڈرون حملہ؟ سرکاری تصدیق ہنوز باقی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

لبنان کے ٹی وی چینل المیادین نے رپورٹ کیا ہے کہ شام میں دو امریکی فوجی اڈوں کو ڈرونز سے نشانہ بنایا گیا ہے۔ تاہم فوری طور پر اس خبر کی کسی بھی ملک کے سرکاری ذریعے سے تصدیق ہوئی اور نہ ہی تفصیلات سامنے آئی ہیں۔

ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ایک امریکی فوجی اڈہ اردن اور عراق کی سرحد سے متصل شامی علاقے میں قائم ہے۔ اس کا نام التنف بیس ہے۔ اس پر مبینہ طور پر ڈرون حملہ کیا گیا ہے۔

علاوہ ازیں شمالی دیر الزور علاقے میں امریکہ کے 'کونوکو بیس' پر بھی میزائل فائر کیے جانے کی اطلاع کا دعویٰ کیا گیا ہے۔ ابھی اس بارے میں مزید اطلاعات کا انتظار ہے۔

واضح رہے ایک جانب امریکہ نے اپنے شہریوں کو جلد سے جلد لبنان چھوڑ دینے کا کہہ رکھا ہے اور دوسری جانب جمعرات ہی کے روز ایرانی فوج کے چیف آف سٹاف جنرل باقری نے انتباہ کیا تھا کہ امریکہ خطے میں صورت حال کو بگاڑ رہا ہے اس لیے دوسرے فریق بھی اسرائیل اور غزہ کے تصادم میں شامل ہو سکتے ہیں۔

دوسری جانب امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلینکن نے ایک روز قبل میزائلوں اور ڈرونز سے متعلق ایرانی پروگراموں کو امریکہ کے لیے بڑے چیلنجوں میں سے ایک قرار دیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں