غزہ، امدادی سامان فراہمی کا تیسرا روز، ایک درجن سے زائد ٹرک رفح پہنچے

بڑے پیمانے پر ہونے والی تباہی کے بعد غزہ میں یومیہ 100 امدادی ٹرک بھجوانے کی ضرورت ہے: اقوام متحدہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غزہ پر اسرائیلی بمباری اور محاصرے کے تیسرے ہفتے کے آغاز کے بعد غزہ میں مقیم فلسطینیوں کو ملنی شروع ہونے والی امداد کی آج پیر کے روز تیسری قسط پہنچی۔

اقوام متحدہ کی نگرانی میں یہ غزہ کے لے رفح کے راستے آنے والا تیسرا امدادی قافلہ تھا۔ پیر کے روز میڈیا رپورٹس کے مطابق ایک درجن سے زائد گاڑیاں امدادی سامان کے ساتھ رفح راہداری سے اندر داخل ہوئیں۔

مصری ہلال احمر کے مطابق اب تک امدادی قافلے پہنچنے کے تیسرے روز تک کل 34 ٹرک یا امدادی گاڑیاں سامان کے ساتھ پہنچ سکے ہیں۔

اقوم متحدہ کا غزہ میں بمباری سے ہونےوالی تباہی کے بعد اندازہ ہے کہ 24 لاکھ کی آبادی جس میں تقریباً نصف کے قریب بمباری سے بے گھر ہو چکے ہیں کو یومیہ بنیاد پر کم از کم مالی امداد سے لدے 100 ٹرک ملنے چاہییں۔

امدادی کاموں سے متعلق کارکنوں کا کہنا ہے غزہ کے جنگ زدہ اور تباہ حال رہائشیوں کو اس سے کہیں زیادہ امداد کی ضرورت ہے جتنی کہ انہیں تین دنوں سے ملنا شروع ہوئی ہے۔

اقوام متحدہ کی انسانی بنیادوں پر ریلیف کاکام کرنے والے ادارے نے ہفتے کے روز کہا تھا ، کہ اسرائیلی 'ناکہ بندی' جو اس نے سات اکتوبر سے شروع کر رکھی ہے اس سے پہلے جتنی خوراک غزہ کے لیے ایک دن میں آ رہی تھی اب پہلے روز آنے والا امدادی سامان اس کا چار فیصد تھا۔

ادھر اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ غزہ میں جانے والا امدادی سامان پوری طرح کنٹرول میں ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں