غزہ میں 10.4 لاکھ افراد بے گھر، نقل مکانی کرنیوالے دسیوں ہزار گھروں کو لوٹ گئے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غزہ کی پٹی میں حماس کے میڈیا آفس نے اتوار کو اعلان کیا کہ پٹی میں بے گھر ہونے والے افراد کی تعداد 14 لاکھ ہو گئی ہے۔ ان میں سے نصف پناہ گاہوں میں ہیں۔ اسرائیلی جارحیت میں جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 4651 تک پہنچ گئی ہے۔ زخمیوں کی تعداد 14 ہزار 245 ہے۔ بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ دیگر بے گھر افراد رشتہ داروں، دوستوں، عوامی سہولیات اور دیگر کی میزبانی کے اجتماعات میں رہ رہے ہیں۔

نصف مکانات متاثر

انہوں نے مزید کہا کہ پٹی میں 50 فیصد ہاؤسنگ یونٹس کو بمباری سے نقصان پہنچا۔ تقریباً 20,000 ہاؤسنگ یونٹس مکمل طور پر منہدم ہو گئے یا ناقابل رہائش بن گئے ہیں۔

دسیوں ہزار لوٹ گئے

بیان میں کہا گیا کہ جنوبی علاقوں میں نقل مکانی کرنے کے بعد دسیوں ہزار بے گھر افراد غزہ شہر اور شمالی غزہ کی پٹی میں اپنی رہائش گاہوں کو واپس چلے گئے ہیں۔ اسرائیلی فوج نے جان بوجھ کر انہیں ان کی نقل مکانی کے مقامات پر نشانہ بنایا۔ حالانکہ ان مقامات کے متعلق دعویٰ کیا جارہا تھا کہ یہ محفوظ مقامات ہیں۔

دوسری طرف مصری حکام نے پیر کو 40 انسانی امدادی ٹرکوں کو رفح راہداری کے ذریعہ غزہ کی پٹی میں بھیجنے کی تیاری کر لی ہے۔

مصری ذرائع نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ اس رفح گزرگاہ کے ذریعے اتوار کے روز طبی امداد اور ادویات سے لدے 17 ٹرک غزہ کی پٹی میں داخل ہوتے دیکھے گئے۔ ہفتے کے روز اس کراسنگ سے 20 ٹرک غزہ میں داخل ہوئے تھے۔

طبی امداد کے قافلے

امدادی قافلوں میں تمام ماہرین کے ڈاکٹر، ادویات، طبی آلات، سانس لینے والے آلات ، الیکٹرک شاک مشینیں، دائمی بیماریوں کی دوائیں، سرجیکل سپلائیز، بچوں کی فارمولا خوراک، آکسیجن ٹیوبز اور خون کے بیگ شامل ہیں۔ رفح گزرگاہ پر غزہ داخلے کی اجازت کے منتظر 175 امدادی ٹرک مصر میں کھڑے ہیں۔

یاد رہے اس حملے کے بعد اسرائیل نے 2007 سے غزہ کی پٹی پر مسلط کردہ محاصرے کو مزید سخت کر دیا ہے۔ اسرائیل نے غزہ کی پٹی کو ایندھن، پانی، ادویات اور خوراک کی سپلائی کو بھی معطل کردیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں