حماس کا غزہ سے 220 کلومیٹر دور اسرائیلی علاقے پر راکٹ حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

حماس نے اسرائیل کے دور دراز کے تفریحی مقام ایلات کو راکٹ حملوں سے نشانہ بنایا یے۔ تاہم اسرائیلی فوج کا کہنا ہے کہ اس راکٹ حملے سے فوری طور پر کسی نقصان کی اطلاع نہیں ملی ہے۔

فلسطینی مزاحمتی گروپ حماس نے پچھلے برسوں کے دوران اپنے راکٹوں کی استعداد بڑھانے کے علاوہ تعداد بھی بڑھائی ہے، اسی تعداد اور استعداد کے بڑھانے کی وجہ سے اسرائیل کو اب کی بار حماس سے حیران کن حملوں کا سامنا ہوا ہے۔

جبکہ اسرائیل کا جدید ترین اور مضبوط ترین دفاعی نظام بھی حماس کے راکٹ حملوں کے سامنے ناکارہ ثابت ہو گیا ہے۔ تاہم اب بدھ کے روز حماس نے اب تک چلائے گئے راکٹوں میں سے سب سے زیادہ دور مار کرنے والے راکٹ کا استعمال کیا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ یہ راکٹ غزہ سے 220 کلو میٹر دور واقع اسرائیلی تفریحی مرکز ایلات کو نشانہ بنانے کے لیے بروئے کار آئے ہیں۔ اسرائیلی فوج نے اس راکٹ حملے کی مار اسرائیل کے باہر والے علاقے تک ہوئی تسلیم کی ہے۔ تاہم کسی فوری نقصان کی تصدیق نہیں کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں