سعودی حکام کی العلا انٹرنیشنل ایئرپورٹ کی توسیع کے ڈیزائن کی نقاب کشائی

سالانہ گنجائش 400,000 سے بڑھا کر 60 لاکھ مسافروں تک کرنے کا توسیعی منصوبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی پریس ایجنسی نے ہفتہ کو رپورٹ کیا کہ مستقبل میں سرمایہ کاری کے اقدام کے دوران رائل کمیشن برائے العلا گورنریٹ نے العلا بین الاقوامی ہوائی اڈے کے دوسرے ٹرمینل کے ڈیزائن کی نقاب کشائی کی۔

ڈیزائن تاریخی مقام کے قدیم شہری ورثے کی عکاسی کرتے ہیں اور قدرتی اور ثقافتی ماحول سے ہم آہنگ ہیں۔

ڈیزائنز کا اعلان ایک عالمی مقابلے کے بعد کیا گیا جس نے بڑے ڈیزائن ہاؤسز کو مجتمع کیا اور یہ ڈیزائنز ہوائی اڈے کے منصوبے اور اس کی توسیع میں ایک اہم اضافے کی نمائندگی کرتے ہیں۔

رائل کمیشن برائے العلا گورنریٹ کا مقصد مختلف بین الاقوامی اور مقامی مقامات کے لیے فضائی رابطے کو بڑھانا ہے جس سے العلا کو مملکت کے شمال مغرب میں ایک عالمی لاجسٹک مرکز کے طور پر پوزیشن میں لانا ہے۔

العلا جو مارچ 2021 میں بین الاقوامی ہوائی اڈہ بن گیا تھا، نئی توسیع سے اس کی گنجائش سالانہ 400,000 مسافروں سے بڑھ کر چھے ملین ہو جائے گی۔

ہوائی اڈے کے کل رقبے کو بھی تقریباً 2.4 ملین مربع میٹر تک بڑھایا جائے گا جس کے فلائٹ ڈیک پر بیک وقت 15 طیاروں کے رکنے کی گنجائش ہوگی۔

نئے ڈیزائن میں شامل توسیعی عناصر میں ایک ہوٹل، ایک سپا، اور متنوع خدمات اور سہولیات شامل ہیں جو آنے والوں کے تجربے میں اضافہ کریں گی۔

یہ اضافہ دنیا کے سب سے بڑے کھلے ہوئے عجائب گھر کے ساتھ مربوط ہے اور اسے بین الاقوامی معیارات پر پورا اترنے والے جدید تکنیکی انفراسٹرکچر اور آلات میسر ہیں۔

رائل کمیشن برائے العلا گورنریٹ ایک عالمی مقام کے طور پر اس علاقے میں ہوائی ٹریفک کی متوقع نمو کے لیے کام کر رہا ہے۔

ریاست کے وژن 2030 کے مقاصد کے تحت یہ العلا کے وژن سے ہم آہنگ ہے جبکہ شناخت کو برقرار رکھتا اور گورنریٹ کے تہذیبی، ثقافتی اور ماحولیاتی پہلوؤں کو اجاگر کرتا ہے۔

گذشتہ برسوں کے دوران العلا انٹرنیشنل ایئرپورٹ نے متعدد منصوبوں کا مشاہدہ کیا ہے جن کا مقصد مسافروں کے استقبال کو بہتر بنانا اور العلا کے لوگوں اور مہمانوں کو خدمات فراہم کرنا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں