متحدہ عرب امارات کا غزہ میں اسرائیل کی زمینی کارروائی پر اظہار مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات نے اسرائیلی فوج کی جانب سے غزہ پر زمینی کارروائی کی مذمت کرتے ہوئے تشویش کا اظہار کیا ہے۔

ریاست کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ’’وام‘‘ نے وزارت خارجہ کی جانب سے جاری بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ ’غزہ میں فوری طور پر جنگ بندی کرتے ہوئے معصوم شہریوں کا خون بہانا بند کیا جائے‘۔

وزارت خارجہ نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار داد پر فوری عمل کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے جس میں انسانی بنیادوں پر جنگ بندی روکنے اور غزہ کے شہریوں کو امداد کی فوری فراہمی کو یقینی بنانے کی اہمیت پر زور دیا ہے۔

اماراتی وزارت خارجہ نے کہا کہ’ شہریوں کی جانوں کا تحفظ ترجیحی بنیادوں پر یقینی بنانے کےلیے وہاں جاری عسکری کارروائیوں کو بند کیا جائے تاکہ غزہ پٹی میں امن قائم ہو اور شہریوں کو امدادی اشیا پہنچائی جا سکیں‘۔

یہ بیان اس وقت سامنے آیا ہے جب اسرائیلی فوج نے جمعے کی شام کو اسرائیل نے غزہ کی پٹی پر فضائی حملے تیز کر دیے تھے۔ اسرائیلی فوج کا کہنا تھا کہ حملوں میں حماس کے اہداف خصوصاً زیر زمین سرنگوں کو نشانہ بنایا گیا۔

فلسطین کے سول ڈیفنس کا کہنا تھا کہ اندھا دھند فضائی اور آرٹلری کے حملوں میں سینکڑوں عمارتیں تباہ ہو گئی جبکہ ہزار گھر ملبے کا ڈھیر بن گئے۔

یہ اس وقت بھی سامنے آیا جب اقوام متحدہ کے ہائی کمشنر برائے انسانی حقوق وولکر ترک نے سنیچر کو خبر دار کیا تھا کہ

اسرائیل کی جانب سے غزہ میں زمینی کارروائی میں توسیع کے باعث مزید ہزاروں شہریوں کے ہلاک ہونے کا خدشہ ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں