لبنانی سرحد پر دو دہشت گردی کے سیل اور ایک آبزرویشن پوسٹ تباہ کر دی : اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی فوج نے دعوی کیا ہے کہ اس نے دہشت گردوں کے دو خفیہ سیل اور حزب اللہ کی ایک پوسٹ تباہ کر دی ہے۔ اسرئیلی فوج نے اس کارروائی کے ہونے کی اطلاع ہفتے کے روز دی ہے۔

بتایا گیا ہے کہ یہ کارروائی لبنانی سرحد کی طرف سے مسلسل فائرنگ کے جواب میں کی گئی ہے۔واضح رہے اسرائیل اور حزب اللہ کے درمیان سرحدی جھڑپیں اسرائیل اور حماس کی لڑائی کےساتھ ہی شروع ہو گئی تھیں۔ لبنانی سرحد کی جانب سے اسرائیل کو شیلنگ کا سامنا ہے۔ لبنان اور اسرائیل کے درمیان تازہ ترین جھڑپیں حزب اللہ کے سربراہ حسن نصراللہ کی اس دھمکی کے بعد سامنے آئی ہیں کہ اسرائیل حماس جنگ پورے علاقے میں پھیل سکتی ہے۔

ہفتے کے روز اسرائیلی فوج نے جاری کردہ بیان میں کہا ہے دہشت گردوں کے دو سیلوں کو ان کی طرف سے فائرنگ کے بعد نشانہ بنایا گیا ہے۔ اسرائیلی فوج کے مطابق حزب اللہ کی ایک آبزرویشن پوسٹ کو بھی ختم کر دیا گیا ہے۔

بیان میں یہ کہا گیا ہے کہ اسرائیل نے لبنان کی جانب سے اسرائیل پر مارٹر گولے فائر کرنے کا بھی جواب دیا ہے۔ واضح رہے اب تک اسرائیلی فوج کی بمباری سے 9200 فلسطینی شہری شہید ہو چکے ہیں۔ جن میں بڑی تعداد عورتوں اور بچوں کی ہے۔
ادھر لبنان اور اسرائیل کی سرحد پر عام طور پر جھڑپیں اور گولہ باری ہونے کی اطلاعات ملتی رہتی ہیں۔ تاہم اب غزہ پر مسلسل اسرائیلی بمباری نے اس صورت حال میں شدت پیدا کر دی ہے۔ حسن نصراللہ نے جمعہ کے روز اپنے خطاب میں یہ بھی کہا تھا کہ حزب اللہ شروع سے ہی اس جنگ کا حصہ بن چکی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں