فضائیہ مشرق وسطیٰ کے کسی بھی خطے پر بمباری کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے: اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی ڈیفنس فورسز کے چیف آف اسٹاف ہرزی ہیلیوی نے پیر کے روز دعویٰ کیا ہے کہ فضائیہ مشرق وسطیٰ کے کسی بھی خطے پر بمباری کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔

انہوں نے آج شام ایک بیان میں کہا کہ ’’ہم دوسرے خطوں سے نمٹنے کے لیے ہمہ وقت تیار ہیں‘‘

انہوں نے بتایا کہ انہوں نے 140 ویں ایئر سپورٹ سکواڈرن کے ہیڈ کوارٹر کا دورہ کیا جہاں انہوں نے "اڈیر" طیارے کا معائنہ کیا۔

غزہ میں لڑائی جاری ہے

دوسری طرف اسرائیلی فوج کے ترجمان نے کہا ہے کہ غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوج کی لڑائی جاری ہے۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیلی فوج نے غزہ کی پٹی میں حماس کی ایک عمارت کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ "ہم شمالی غزہ میں سرنگوں کو تباہ کرنے کا سلسلہ جاری رکھے ہوئے ہیں‘‘۔

انہوں نے کہا کہ "ہم نے جنوبی لبنان میں کئی مقامات کو نشانہ بنایا ہے"۔

اسرائیل نے غزہ کی پٹی میں اپنے زمینی آپریشن کے دوسرے مرحلے کے آغاز کا اعلان کیا ہے جہاں زمین میں گہرائی تک گھس کر سرنگوں کی تلاش اور شناخت کرکے انہیں تباہ کیا جا رہا ہے۔

ایک فوجی ترجمان نے پیر کے روز انکشاف کیا ہے کہ اسرائیلی فورسز فوجیوں اور ٹینکوں کے ساتھ علاقے کو الگ تھلگ کرنے کے بعد شمالی غزہ کی پٹی میں حماس کے جنگجوؤں کو ان کی سرنگوں اور زیر زمین ٹھکانوں پر حملہ کرنے کی تیاری کر رہے ہیں۔

لیفٹیننٹ کرنل رچرڈ ہیچٹ نے نامہ نگاروں سے مزید کہا کہ ’’اب ہم ان پر شکنجہ کسنا شروع کریں گے‘‘۔"جب میں کہتا ہوں کہ ہم پیچ کو سخت کر رہے ہیں تو اس کا مطلب زمین کے اوپر اور نیچے بھی ہے۔"

قابل ذکر ہے کہ اسرائیلی فوج نے آج منگل کو کہا تھا کہ اس نے کل رات غزہ کی پٹی میں حماس سے تعلق رکھنے والے 450 اہداف پر حملہ کیا جس میں متعدد جنگجو مارے گئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں