فلسطین اسرائیل تنازع

عالمی ریڈ کراس کے امدادی قافلے پرغزہ میں فائرنگ، ایک ٹرک ڈرائیور زخمی

اس سے قبل ایمبولینسوں اور ہسپتالوں پر بمباری بھی کیا جا چکی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اسرائیلی فوج نے غزہ میں ادویات اور طبی آلات پہنچانے کے لیے جانےوالے ایک امدادی قافلے پر حملہ کر دیا۔ یہ امدادی قافلہ ' الشفا ہسپتال' کے لیے امدادی اشیا لے کر جا رہا تھا۔

بین الاقوامی ریڈ کراس نے مطابق یہ امدادی قافلہ منگل کے روز اسرائیلی فائرنگ کی زد میں آیا ۔'

اس فائرنگ کے باعث امدادی قافلے میں شامل دو ٹرکوں کو نقصان پہنچا ہے۔ ان میں سے ایک ٹرک کا ڈرائیور بھی معمولی زخمی ہوا گیا۔

ریڈ کراس کی طرف سے بتایا گیا ہے کہ یہ امدادی قافلہ زندگی بچانے والی ادویات لے کر جا رہا تھا ، اس نے القدس ہسپتال غزہ کو بھی سپلائی دینا تھی کہ اسے راستے میں فائرنگ کا سامنا کرنا پڑ گیا۔

تاہم ریڈ کراس نے فائرنگ کرنے والوں کی نشاندہی نہیں کی ہے۔ تاہم یہ بتایا گیا ہے کہ اس واقعے کے بعد امدادی قافلے نے اپنا راستہ تبدیل کر لیا اور الشفا ہسپتال پہنچ گیا۔ بعد ازاں ریڈ کراس کا قافلہ چھ ایمبولینسوں میں شدید زخمیوں کے ساتھ رفح راہداری سے گذر کر مصر کی طرف لوٹ گیا۔

ریڈ کراس کے ادارے کے مقامی سربراہ ولیم سکومبرگ نے کہا ' یہ صورت حال ایسی نہیں ہے کہ اس میں ریڈ کراس کے کارکن کام کر سکیں۔ ' انہوں نے کہا ' ریڈ کراس کی امدادی وسیع پیمانے پر صرف اسی صورت جاری رکھی جا سکتی ہے جب بین ا لاقوامی قوانین کی پابندی کی جا رہی ہو' ۔

واضح رہے اس سے پہلے ریڈ کراس کے عالمی ادارے نے ایمبولینسوں اور ہسپتالوں پر اسرائیلی حملوں کی مذمت کر چکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں