سعودی عرب کی ڈاکٹر ھلا خاشقجی جنہوں نے فٹ بال اور سرجری کے شوق کو یکجا کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی نوجوان خاتون ڈاکٹر ھلا الخاشقجی دو بالکل مختلف شوق فٹ بال اور طب کو ایک جگہ جمع کرکے منفرد مثال قائم کی ہے۔

ڈاکٹر ہلا سعودی عرب میں ایک ہسپتال میں سرجن ہیں مگر اس کے ساتھ ساتھ وہ الاتحاد کلب کے ساتھ فٹ بال کھیلنے کی صلاحیتوں کو بھی پروان چڑھا رہی ہے۔

خاندان کا تعاون

انہوں نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ "میرے آس پاس موجود ہر شخص کا کہنا ہے کہ میڈیسن کی تعلیم کو فٹ بال کھیلنے کی شناخت کے ساتھ جوڑنا مشکل ہے، لیکن میں اپنے وقت کو منظم کرنے اور کھیل میں اپنی صلاحیتوں کو بڑھانے کی خواہش مند تھی۔ جب سےمیں نے شعور کی آن کھولی تو اپنے خاندان کو فٹ بال کے کھیل کا شوقین پایا۔ یہی وجہ ہے کہ فٹ بال کی طرف آنے میں میرے خاندان نے میری ہرممکن مدد کی۔ چونکہ میرا خاندان الاتحاد کلب کو سپورٹ کرتا ہے، یہی وجہ ہے کہ میں نے بھی وہی کلب منتخب کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ "میرے والد مجھے خواتین کے فٹ بال کے میدان میں لے جاتے تھے اور جب میں نے انہیں دیکھا تو میں ان جیسا بننا چاہتی تھی لہذا میں نے 9 سال کی عمر سے ہی کلب جوائن کرلیا۔ جب میں فٹ بال کے کھیلنے لگی تو میں نے ویمنز پریمیئر لیگ چیمپئن شپ مقابلوں میں شرکت شروع کی"۔

ھلا نے مزید کہا کہ"شروع میں مجھے میڈیکل کے شعبے میں اپنی پڑھائی کو متوازن کرنے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑا، خاص طور پر سرجری اور ایک فٹ بال کھلاڑی ہونے کے ناطے یہ مشکل تھا، لیکن وقت اور تجربے کے ساتھ، جب میں نے بہترین طریقہ دریافت کر لیا تو یہ آسان ہو گیا۔

ہر چیز سے فائدہ اٹھانے کے لیے اپنی پڑھائی اور اپنے وقت کا صحیح طریقے سے انتظام واحد اصول تھا جس پر چل کرمیں دو مختلف شعبوں میں نمایاں کامیابی حاصل کی۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ ڈاکٹرھلا نے الاتحاد کلب کے ساتھ ویمنز پریمیئر لیگ اور سعودی پریمیئر فٹبال لیگ میں شرکت کی اور آنے والے دنوں میں مزید بہت سے مقابلوں میں شرکتیں ہونے والی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں