نقل مکانی کرنے والے بے گھر افراد پر اسرائیلی بمباری کی ویڈیو جاری

سفید پرچم لہرانے والے فلسطینیوں پر اسرائیلی فوج کی بمباری کی ویڈیو بھی سامنے آگئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی فوج کی جانب سے شمالی غزہ کے رہائشیوں کو پٹی کے جنوب میں نقل مکانی کا حکم دینے کے بعد 4 ہفتوں سے زائد عرصے سے جاری بمباری میں شدت پیدا کرنے کی دھمکی کے بعد ایک ویڈیو کلپ میں بمباری کے اثرات دکھائے گئے ہیں ۔۔ اس بمباری میں بے گھر افراد کو نشانہ بنایا گیا تھا۔

ایک ویڈیو کلپ میں دکھایا گیا ہے کہ اسرائیلی میزائل جمعہ کے روز غزہ کی پٹی میں محفوظ علاقوں کی طرف جاتے ہوئے بے گھر افراد کو نشانہ بنا رہے ہیں۔

تصاویر میں غزہ کی صلاح الدین سٹریٹ پر بے گھر فلسطینیوں پر بمباری کے اثرات دکھائے گئے۔ نقل مکانی کرنے والے افراد کی گاڑیاں مکمل تباہ ہوگئیں۔ بمباری کے نتیجے میں سڑک کے اطراف میں جلی ہوئی گاڑیاں نظر آئیں۔

فلسطینی خبر رساں ایجنسی نے بھی بمباری میں درجنوں فلسطینیوں کے جاں بحق ہونے کی اطلاع دی اور کہا کہا کہ شہید ہونے والوں میں زیادہ تعداد بچوں، خواتین اور بوڑھوں کی ہے۔

اسی طرح کے ایک اور کلپ سے انکشاف ہوا ہے کہ اسرائیلی فورسز نے فلسطینی شہریوں کو غزہ میں آج جمعہ کو الرنتیسی چلڈرن ہسپتال خالی کرنے کا حکم دیا۔ اس کلپ میں دکھایا گیا کہ بے گھر ہونے والے لوگ سفید جھنڈے لہرا رہے ہیں اور ان پر اسرائیلی فوج نے فائرنگ کردی ہے۔

غزہ کی پٹی میں الرنتیسی ہسپتال برائے بچوں کے ڈائریکٹر بکر قعود نے تصدیق کی کہ طبی ٹیموں کو طاقت، گولہ باری اور بمباری کی دھمکیوں کے ذریعے النصر میڈیکل کمپلیکس کو مکمل طور پر خالی کرنے پر مجبور کیا گیا۔ النصر کمپلیکس میں چار ہسپتال شامل ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ بمباری کی اسرائیلی دھمکی کے تحت ہم نے تمام طبی عملے، زخمیوں، بے گھر ہونے والوں اور یہاں تک کہ مصنوعی آکسیجن پر موجود مریضوں کو باہر نکال دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں