اسرائیلی فوج نے الشفا کمپلیکس میں کارڈیالوجی ڈیپارٹمنٹ کی عمارت تباہ کردی

غزہ میں ہسپتالوں کے اطراف تباہ کن صورتحال، اسرائیل کا شہریوں کو نکلنے کے لیے الشفا، الرنتیسی اور النصر ہسپتالوں سے محفوظ راستہ دینے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی فوج نے شمالی غزہ کی پٹی میں الشفا، الرنتیسی اور النصر ہسپتالوں سے ایک محفوظ راہداری کھولنے کا اعلان کیا ہے تاکہ عام شہری جنوب کی طرف ہجرت کر سکیں۔ فوج نے مزید کہا کہ حالیہ دنوں میں غزہ میں ایک اسرائیلی رابطہ کار سینئر افسر نے الشفاء ہسپتال کے ڈائریکٹر سے کئی مرتبہ بات کی اور انہیں ہسپتال سے ممکنہ راہداری پیش کی ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ اسرائیل کی دفاعی افواج کے سپاہیوں نے ایک راہداری کھولی اور اسے محفوظ بنایا ہے جس سے شہری آبادی کو پیدل اور ایمبولینس کے ذریعے الشفا، الرنتیسی اور الناصر ہسپتالوں سے نکالا جا سکتا ہے۔

اسرائیلی فوج نے کہا کہ حماس اپنی دہشت گردانہ کارروائیوں کے لیے غزہ کی پٹی میں شہری ہسپتالوں اور دیگر عمارتوں کو استعمال کر رہی ہے۔ واضح رہے غزہ میں جنگ کو 37 روز ہوگئے ہیں۔ اسرائیلی جارحیت میں اب تک 11180 فلسطینی شہید ہو چکے ہیں۔

تازہ ترین میدانی پیشرفت میں اسرائیلی فورسز نے غزہ کے الشفا ہسپتال کا محاصرہ کیا ہوا ہے۔ ہسپتال کے اطراف میں فوجی کارروائیاں جاری ہیں۔ الشفا ہسپتال میں آکسیجن ختم ہونے سے مریضوں کی جان خطرے میں پڑ گئی ہے۔

غزہ میں وزارت صحت نے اعلان کیا کہ اسرائیلی حملے میں شفا کمپلیکس میں کارڈیالوجی کا شعبہ تباہ کردیا ہے۔ ہسپتال میں بجلی کرنٹ لگنے سے 3 قبل از وقت پیدا ہونے والے بچوں سمیت 5 بچے جاں بحق ہو گئے ہیں۔ الشفاء کمپلیکس کے ڈائریکٹر نے العربیہ کو بتایا کہ اسرائیلی ٹینکوں نے عمارت کو مکمل طور پر گھیرے میں لے رکھا ہے اور جلد ہی ہسپتال میں تمام سروسز بند ہو جائیں گی۔

العربیہ اور الحدث کے نامہ نگار نے ہسپتال کے اندر سے اطلاع دی ہے کہ اسرائیلی فوج نے الشفا ہسپتال کا زمینی اور ہوائی راستے سے محاصرہ کر رکھا ہے۔ ہسپتال کے ارد گرد جھڑپیں جاری ہیں اور ہسپتال کے اوپر اسرائیلی ڈرون پرواز کر رہے ہیں۔ ایمبولینسوں کو زخمیوں اور بیماروں کو الشفاء کمپلیکس تک لے جانے سے مکمل طور پر روک دیا گیا ہے۔

فلسطینی میڈیا کے مطابق اسرائیلی فوج نے غزہ کے جنوب میں خان یونس میں ایک گھر پر بھی بمباری کی۔ اس بمباری کی وجہ سے کم از کم 13 افراد جاں بحق ہوگئے۔

غزہ کے متعدد علاقوں میں پرتشدد جھڑپیں جاری ہیں ۔ سڑکوں پر جنگیں ہو رہی ہیں۔ بیت حانون کے شمال میں ابراج العودہ کا علاقہ، جبالیہ کے شمال میں اور غزہ کی پٹی کے شمال میں بیت لاھیا میں گھمسان کی لڑائی جاری ہے۔ جنگ کے 37 ویں روز غزہ شہر کے متعدد علاقوں میں بیک وقت جھڑپیں ہوئیں۔ النصر اور شیخ رضوان کالونیوں اور اطراف میں بھی لڑائی ہوئی۔

اسرائیلی میڈیا کے مطابق غزہ کی پٹی کے آس پاس کے قصبوں میں سائرن زور سے بجنے لگے۔ اتوار کی صبح غزہ سے اطراف کے علاقوں میں راکٹ فائر کئے گئے تھے۔ عالمی ادارہ صحت نے کہا ہے کہ اس کا شمالی غزہ کی پٹی کے الشفاء ہسپتال سے رابطہ منقطع ہو گیا ہے۔

غزہ میں وزارت صحت کے ترجمان اشرف القدرہ نے بتایا کہ غزہ کی پٹی کے سب سے بڑے ہسپتال الشفاء میڈیکل کمپلیکس میں ایندھن ختم ہونے کے بعد ہفتہ کے دن سے آپریشن کرنا بند کردئیے گئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں