یورپی کمیشن کی سربراہ مصر اور اردن کے سربراہان سے ملاقات کریں گی

غزہ کے لیے مصر پہنچنے والی یورپی امداد کا بھی صحرائے سینا میں استقبال کریں گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یورپی کمیشن کی سربراہ ارسلا وان ڈیر لیئین مصر اور اردن کے دورے کے لیے 18 نومبر کو پہنچیں گی۔ یہ بات یورپی کمیشن کے ترجمان نے سوشل میڈیا پر بتائی ہے۔

کمیشن سربراہ قاہرہ میں صدر عبدالفتاح السیسی سے ملاقات کریں گی اور صحرائے سینا میں پہنچنے والے امدادی سامان کا انتظار کریں گی، جسے بعد ازاں غزہ منتقل کیا جائے گا۔

قاہرہ اور صحرائے سینا میں اپنی مصروفیات کے بعد یورپی کمیشن سربراہ اردنی دارالحکومت عمان میں شاہ عبداللہ سے بھی ملاقات کریں گی۔

ادھر غزہ میں اسرائیلی فوج نے بدھ کے روز 'الشفاء ہسپتال ' میں گھس کر تلاشی مکمل کر لی ہے۔ وہ حماس کے عسکریت پسندوں کی تلاش اور ان کے مبینہ ہیڈ کوارٹر کی تلاش میں اس بڑے ہسپتال میں عالمی سطح پر سخت تنقید اور دباو کی پروا کیے بغیر گھسی تھی۔

اسرائیلی فوج نے ہسپتال کے ایک ایک کمرے اور تہہ خانے کی تلاشی لی۔ اسی ہسپتال میں منگل کے روز 170 لاشوں کی اجتماعی قبر بنائی گئی، جو اسرائیلی فوج کی طرف سے ہسپتال کے حالیہ بد ترین محاصرے کے دوران جاں بحق ہوئے مگر ان کی لاشیں باہر لے جانے کی اجازت نہیں تھی۔

دنیا بھرکے لیے جہاں ایک ہسپتال میں اجتماعی قبر ایک انتہائی غیر معمولی چیز ہے ، وہیں کسی ملک کی فوج کا ہسپتال کا کئی دن تک محاصرہ، ہسپتالوں پر بمباری اور فائرنگ کے علاوہ اس طرح تلاشی لینا غیر معمولی اور حیران کن واقعہ ہے۔

تاہم اسرائیلی فوج نے اپنے غزہ پر حملے کے حالیہ دنوں میں 'الشفاء ہسپتال ' پر چڑھائی اور اس کی تلاشی کے نام پر اس میں آپریشن کو ہی اپنا اہم ترین ہدف بنا لیا تھا۔ اس سے قبل اسرائیلی فوج کافی دنوں سے دعویٰ کر رہی تھی' حماس نے ہسپتال کو اپنے آپریشنز کے لیے ہیڈ کوارٹر بنا رکھا تھا اور اس کے تہہ خانوں سے سرنگیں کھود رکھی ہیں۔ اسرائیلی فوج نے اس چکر میں ہسپتال کا ایک ایک کونہ کھود ڈالا۔لیکن حماس نے اس کی ہمیشہ تردید کی ۔ ابھی تک اسرائیلی فوج کی طرف سے کوئی ایسی چیز نہیں لائی گئی جس کی اسے تلاش تھی تاکہ دنیا کے سامنے اپنا موقف درست ثابت کر سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں