فلسطین اسرائیل تنازع

اسرائیلی فوج کا الشفاء ہسپتال کے قریب ایک یرغمالی خاتون کی لاش ملنے کا دعویٰ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی فوج نے جمعرات کو اعلان کیا ہے کہ اسے غزہ شہر کے الشفاء ہسپتال کے قریب 7 اکتوبر کو ہونے والے حملے کے دوران حماس کے ہاتھوں اغوا کی گئی ایک اسرائیلی یرغمالی خاتون کی لاش ملی ہے۔

فوج کے ایک بیان میں وضاحت کی گئی ہے کہ اس خاتون کی لاش جسے کبوتز بئیری سے اغوا کیا گیا تھا "اسرائیلی فوج کے دستوں نے غزہ کی پٹی میں الشفاء ہسپتال سے ملحقہ عمارت سے نکال کر اسرائیلی علاقے میں منتقل کردیا ہے"۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان کے سپاہیوں نے یہودیت ویس کی لاش برآمد کی جو تقریباً 240 مغوی افراد میں سے تھی۔

اسرائیلی آرمی چیف آف اسٹاف نے بھی جمعرات کو کہا کہ اسرائیل شمالی غزہ کی پٹی میں حماس کے فوجی نظام کو تباہ کرنے کے قریب ہے۔ لیفٹیننٹ جنرل ہرزی ہیلیوی نے کہا کہ "ہم شمالی غزہ کی پٹی میں حماس کے عسکری سسٹم کو تباہ کرنے کے قریب ہیں۔ ہم اسےجلد مکمل کر لیں گے"۔

حماس کے متعدد رہنماؤں کے گھروں پر بمباری

اسرائیلی فوج کے ترجمان اویچائی ادرعی نے جمعرات کو کہا ہے کہ اسرائیلی فورسز نے دو زیر زمین کمپاؤنڈز کو نشانہ بنایا جن میں مبینہ طور پر حماس کے متعدد رہنما چھپے ہوئے تھے۔ ترجمان نے ان رہ نماؤں کے بارے میں نہیں بتایا کہ آیا وہ زندہ ہیں یا مارے گئے ہیں۔

ادرعی نے وضاحت کی کہ پہلے کمپلیکس میں جو رہنما تھے ان میں "حماس میں شمالی غزہ کی پٹی بریگیڈ کے کمانڈر احمد الغندور اور حماس میں راکٹ فورس کے کمانڈر ایمن صیام شامل تھے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دوسرے کمپلیکس میں حماس کے سیاسی بازو کے کئی سینیر رہنما چھپے ہوئے تھے، جن میں روحی مشتہی ،حماس کی حکومت کے سینیر عہدیدار عصام الدعلیس کے علاوہ دیگر رہ نما شامل تھے۔

انہوں نے کہا کہ حماس حملوں کے نتائج کو چھپانے کی کوشش کر رہی ہے اور میں اس سے زیادہ بات نہیں کر سکتا لیکن اس بات کی تصدیق کی جا سکتی ہے کہ زیر زمین ڈھانچے کو شدید نقصان پہنچا ہے۔

اسرائیلی فوج نے کہا کہ اسے غزہ کے الشفا میڈیکل کمپلیکس میں حماس کی ایک سرنگ اور ہتھیاروں سے بھری گاڑی ملی ہے۔ فوج نے مزید کہا کہ الشفا ہسپتال میں اسرائیلی فوج کے دستوں کو ایک سرنگ اور ایک گاڑی ملی جس میں بڑی تعداد میں ہتھیار موجود تھے۔ فوج نے سرنگ کھولنے اور ہتھیاروں کی ویڈیو کلپس اور تصاویر شائع کیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں