فلسطین اسرائیل تنازع

اسرائیلی فوجی طیاروں کی حماس کے "جنگجووں" پر جوابی فائرنگ ، متعدد شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی فوج نے بدھ کے روز کہا کہ اس نے طیاروں کو "جنگجووں" کے ڈھانچے پر حملہ کرنے کی ہدایت کی جہاں سے افواج پر گولہ باری کی گئی تھی اور اس حملے میں متعدد "جنگجو" شہید ہو گئے کیونکہ فوج "جنگجووں کے بنیادی ڈھانچے کو نشانہ بنانے،جنگجووں کو مارنے اور ہتھیاروں کا پتہ لگانے" کے لیے غزہ کی پٹی میں کام جاری رکھے ہوئے ہے۔

اسرائیلی فوج نے ایک بیان میں کہا، "[اسرائیلی فوج] نے شمال مغربی جبالیہ میں شیخ زید میں بھی ہدفی چھاپے مارے۔ ان چھاپوں کے دوران علاقے میں حماس کے جاسوسوں کی شناخت کر کے انہیں شہید کر دیا گیا۔"

دریں اثناء جبالیا میں فلسطینی حکام نے اطلاع دی کہ غزہ کے شمال میں جبالیہ پناہ گزین کیمپ میں ایک مسجد کو نشانہ بنانے والی اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں درجنوں افراد شہید اور زخمی ہو گئے۔ فلسطینی خبر رساں ایجنسی وافا کے مطابق اسرائیلی جنگی طیاروں نے ارد گرد کے علاقے میں متعدد میزائل داغے جس کے نتیجے میں 33 افراد شہید اور دیگر زخمی ہو گئے۔

وفا نے اس ہفتے کے شروع میں اطلاع دی تھی کہ اسرائیلی جنگی طیاروں نے شمالی غزہ کی پٹی میں بیت لاہیہ، جبالیہ اور بیت حنون پر گولہ باری جاری رکھی۔

اسرائیلی فوج نے مزید کہا: "گذشتہ چند دنوں کے دوران [اسرائیلی فوج] کے دستوں نے بیت حانون کے علاقے میں ہدفی چھاپے مارے۔ آپریشن کے دوران فوجیوں نے ایک شہری رہائش گاہ کے اندر متعدد ہتھیار، اے کے 47 رائفلوں، کلہاڑیوں اور گولہ بارود کا پتا لگایا۔ [فوج] کے دستوں نے بھی لڑائی میں حصہ لیا اور متعدد جنگجووں کے ٹھکانوں کو ختم کر دیا۔"

اسرائیلی فوج نے کہا، اس سے پہلے آج "[اسرائیلی فوج کے دستوں نے] دہشت گردی کی ایک سرنگ کے دہانے کو بے اثر کر دیا جہاں سے حماس کے ایک جنگجو نے باہر نکل کر فوجیوں پر فائرنگ کی۔ مزید برآں [فوج] کے دستوں نے جنگجووں کی شناخت کی اور ایک ایسے ڈھانچے میں موجود ہتھیاروں کا پتا لگایا جو حماس جنگجو تنظیم کے زیرِ استعمال تھا۔ فوجیوں نے جنگجووں کو جاں بحق اور ڈھانچے کو تباہ کر دیا۔"

مزید یہ کہ "گذشتہ روز زمینی دستوں کی مدد کے طور پر اسرائیلی بحریہ افواج نے ایک ڈھانچے سمیت حماس کے متعدد فوجی اہداف کو نشانہ بنایا جہاں سے فوجیوں پر چھپ کر فائر کیے گئے تھے۔ نیز ساحلی پٹی کے ساتھ واقع کئی فوجی چوکیوں کا پتا لگایا۔"

حماس نے فوری طور پر اسرائیلی دعوے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔

مجموعی طور پر فلسطینی حکام نے اعلان کیا ہے کہ اسرائیلی جارحیت کی وجہ سے شہادتوں کی تعداد 14,100 سے تجاوز کر گئی ہے جن میں 5,840 سے زیادہ بچے اور 3,920 خواتین شامل ہیں۔ اس کے علاوہ 33,000 سے زیادہ کے زخمی ہونے اور 6,800 سے زائد کی گمشدگی کی اطلاعات ہیں جن میں فلسطینی وزارتِ صحت کے مطابق 4,500 سے زیادہ بچے اور خواتین شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں