فلسطین اسرائیل تنازع

لبنانی پارلیمان کے رکن کا بیٹا اسرائیلی بمباری میں جاں بحق ہو گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں حزب اللہ کے سینئیر قانون ساز کا بیٹا بھی جاں بحق ہو گیا۔ یہ بمباری اسرائیلی طیاروں نے بدھ کے روز کی تھی۔ بمباری کا ہدف جنوبی لبنان کا علاقہ تھا۔

اسرائیلی بمباری کا نشانہ بننے و الا عباس رعد نامی نوجوان حزب اللہ کے سینئیر پارلیمانی رہنما محمد رعد کا بیٹا ہے۔ اس کی ہلاکت کی تصدیق خاندان کی طرف سے بھی کر دی گئی ہے۔

عباس رعد کی بمباری سے ہلاکت حزب اللہ کے کئی اور نوجوانون کے ساتھ ہوئی ہے۔ اس واقعے کی اسرائیلی ذرائع نے بھی تصدیق کی ہے،تاہم حزب اللہ نے اس واقعے کے بارے میں کچھ نہیں بولا ہے۔

لبنان کے قومی خبر رساں ادارے نے اس بارے میں کہا ' یہ حملہ ہمارے دشمن اسرائیل کی طرف سے کیا گیا تھا۔ جس کے نتیجے میں چار افراد ہلاک اور کئی دوسرے زخمی ہو گئے۔

سات اکتوبر سے اب تک اسرائیلی اور لبنانی سرحد پر اس طرح کی جھڑپوں کا آغاز ہو چکا ہے اور اسرائیلی حزب اللہ کو جبکہ حزب اللہ اسرائیلی فوج کو راکٹ حملوں سے نشانہ بنارہی ہے۔ اب تک لبنان کے 100 سے زائد لوگ جاں بحق ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں