مشرق وسطیٰ

غزہ میں جنگ بندی کا دوسرا روز، غرب اردن میں اسرائیلی فوج کی چھاپہ مار کارروائیاں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیل اور حماس کے درمیان قیدیوں کے تبادلے کے معاہدے پر عمل درآمد کے مقصد سے طے پانے والی جنگ بندی کے دوسرے دن اسرائیلی فورسز نے مغربی کنارے میں متعدد مقامات پر دراندازی کے دوران چھاپہ مار کارروائیاں کی ہیں۔

آج بروز سنیچر اسرائیلی فوجیوں کے ایک گروپ نے مغربی کنارے کے شہر نابلس اور اس کے مشرق میں واقع عسکر کیمپ پر دھاوا بول دیا۔ اسرائیلی فوج نے جیلوں سے رہا ہونے والے فلسطینیوں کی خوشی میں منعقدہ تقریبات کو روکنے کی کوشش کی۔

فلسطینی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسرائیلی فوج نے مغربی کنارے میں واقع الخلیل شہر پر بھی حملہ کیا۔

اس کے علاوہ اسرائیلی فوج کی ایک خصوصی فورس نے جنین کے جنوب میں واقع قصبے قباطیہ پر دھاوا بول دیا۔

یروشلم میں چھاپے

اس سے قبل سنیچر کے روز اسرائیلی فوج نے مغربی کنارے کے شہر البیرہ میں داخل ہو کر جبل الطویل محلے میں الجیوسی خاندان کے گھر پر چھاپہ مارا۔

نیز مقامی ذرائع نے بتایا کہ اسرائیلی فوجیوں نے البالوع محلے میں گولیاں چلائیں، سٹن گرنیڈ اور گیس بم برسائے۔

اسی ضمن میں فلسطین ٹی وی نے رپورٹ کیا ہے کہ اسرائیلی فورسز نے مغربی کنارے کے شہر اریحا میں عقبہ جبر کیمپ پر دھاوا بول دیا۔

اس کے علاوہ اسرائیلی فوج نے مقبوضہ بیت المقدس میں شعفاط پناہ گزین کیمپ میں دراندازی کی۔

یہ چھاپے اس وقت مارے گئے ہیں جب حماس کی طرف سے 13 اضافی اسرائیلیوں کو رہا کرنے کا امکان ہے جس کے بدلے میں اسرائیلی جیلوں میں قید متعدد فلسطینی قیدیوں کے بدلے میں مصری، قطری اور امریکی ثالثی کے ساتھ تبادلے کے معاہدے پر عمل درآمد کل سے جاری ہے۔

گذشتہ روز حماس تحریک نے 10 تھائی باشندوں اور ایک فلپائنی کے علاوہ 13 اسرائیلی قیدیوں کو رہا کیا تھا۔ اس کے بدلے میں اسرائیلی فوج نے جیلوں میں قید 39 فلسطینیوں کو رہا کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں