اسرائیلی فوج نے آباد کار کو فلسطینی مزاحمت کار سمجھ کر قتل کرڈالا

اسرائیلی آباد کار کے قتل کی ویڈیو پر اسرائیلی عوامی حلقوں میں شدید غم وغصے کی لہر دوڑ گئی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

فلسطینی شہریوں کے خلاف اسرائیلی فوج کی انتقامی کارروائیوں اور اندھا دھند فائرنگ میں کئی بار قابض فوج اپنے ہی شہریوں یا فوجیوں پر گولیاں چلا دیتی ہے۔

ایسا ہی ایک تازہ واقعہ گذشتہ روز پیش آیا جب مقبوضہ بیت المقدس فدائی حملے کے مرتکب فلسطینیوں کی غلط فہمی ایک اسرائیلی آباد کار کو گولی مار کر قتل کردیا۔

اسرائیلی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ یروشلم میں ایک بس اسٹیشن پر حملے کے دوران حماس کے عسکریت پسندوں پر حملہ کرنے والے ایک شہری کو غلطی سے اسرائیلی فوجیوں نے گولی مار دی۔

جرمن خبر رساں ادارے کے مطابق جمعرات کی شام اسرائیلی میڈیا نے اس ہسپتال کا حوالہ دیتے ہوئے جہاں اس کا علاج کیا جا رہا تھا کہ بتایا کہ آباد کار کی عمر اڑتیس سال تھی۔ اسے شدید زخمی حالت میں ہسپتال لے جایا گیا مگر وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔

اس شخص نے حملہ آوروں کو ایک بس اسٹاپ پر لوگوں پر گولیاں چلاتے ہوئے دیکھا تھا۔ اس لیے اس نے بے ساختہ ایک کار سے چھلانگ لگا دی اور اپنے ہی ہتھیار سے انہیں گولی مار دی۔ فوجیوں نے حملہ آوروں پر فائرنگ بھی کی لیکن انہوں نے یہ بھی سوچا کہ یہ شخص حملہ آوروں میں سے ایک ہے اور اسے گولی مار دی۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارمز پر ایک ویڈیو وائرل ہو رہی ہےجس میں اسرائیلی فوج کے اہلکاروں کو ایک اسرائیلی آباد کار کو گولی مارتے ہوئے دکھایا گیا ہے، جس کے بارے میں ان کا خیال تھا کہ وہ ایک فلسطینی ہے۔

اس ویڈیو کے سامنے آنے کے بعد اسرائیلی فوج کو بڑے پیمانے پر تنقید کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔

اسرائیلی آرمی ریڈیو نے اشارہ دیا کہ یروشلم میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے 38 سالہ یوول ڈورون کیسل مین نامی اسرائیلی وکیل ہلاک ہو گیا۔

ایک ویڈیو میں دکھایا گیا ہے کہ کیسل مین کو گولی مار کر ہلاک کرنے سے پہلے ایک عوامی سڑک کے فرش پر ہاتھ اٹھاتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

جمعرات کی صبح ایک بس اسٹیشن پر دو فلسطینیوں نے اسرائیلیوں کے ایک گروپ پر فائرنگ کی۔ حملے کے نتیجے میں 3 افراد ہلاک ہو گئے۔ دونوں حملہ آوروں کو مبینہ طور پر فوجیوں اور ایک شہری نے ہلاک کر دیا تھا۔

بعد ازاں حماس نے حملے کی ذمہ داری قبول کر لی تھی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں