فلسطین اسرائیل تنازع

جنگ بندی میں توسیع کے لیے اسرائیلیوں اورفلسطینیوں سے مذاکرات جاری ہیں:وزارت خارجہ قطر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

قطری وزارت خارجہ نے بتایا ہے کہ اسرائیل حماس جنگ بندی میں ایک بار پھر توسیع کے لیے قطری حکام اسرائیلیوں اور فلسطینیوں کے ساتھ مذاکرات جاری رکھے ہوئے ہیں۔ تاکہ جمعہ کے روز سے ختم ہونے والی جنگ بندی کا دوبارہ اجراء ہو سکے۔

تاہم وزارت خارجہ کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ جمعہ کے روز جنگ بندی ختم ہوتے ہی اسرائیل کی طرف سے شروع کر دی گئی بمباری سے مذاکرات میں پیچیدگی پیدا ہوگئی ہے۔

واضح رہے جمعہ کی صبح جیسے ہی جنگ بندی کی مدت ختم ہوئی تو اسرائیلی فوج اور حماس کے درمیان لڑائی شروع ہو گئی۔ فریقین کے درمیان یہ لڑائی ایک ہفتے کے وقفے کے بعد شروع ہوئی ہے۔ بمباری کے فوری بعد ہلاکتوں کی اطلاع ملی ہے۔ یہ ہلاکتیں فلسطینی علاقے سے وزارت صحت کے حکام نے رپورٹ کی ہیں۔

ایک بین الاقوامی نیوز ایجنسی نے کیمرے کی مدد سے شمالی غزہ سے اٹھتے ہوئے سرمئی دھویں کو دکھایا ہے۔ اسی طرح خود کار ہتھیاروں سے کی گئی فائرنگ کی آوازیں بھی سنی گئی ہیں۔ یہ فائرنگ جنگ بندی کا وقت ختم ہونے کے بعد نوے منٹ کے دوران سنی گئی ہے۔

اسرائیلی فوج کا اس بارے میں کہنا ہے ' اس کے طیاروں نے غزہ میں حماس کے ٹھکانوں پر بمباری کی ہے۔ اے ایف پی کے نمائندے کے مطابق اسرائیل کی طرف سے بمباری شمالی اور جنوبی غزہ میں کی گئی ہے۔

رفح کے علاقے میں النجار ہسپتال کے ڈائریکٹر مروان الحمس کے مطابق 'کئی فلسطینی پہنچے ہیں جن کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوج نے شمالی غزہ سے نکل جانے کا کہا ہے۔ '

ڈاریکٹر النجار ہسپتال کے مطابق اب تک کم از کم نو فلسطینی بمباری سے جاں بحق ہو گئے ہیں۔ ان میں چار بچے بھی شامل ہیں۔ ' علاوہ ازیں بھی غزہ میں اسرائیلی فضائی حملے کے دوران دو فلسطینی بچے جاں بحق ہوئے ہیں۔ یہ بات اہلی ہسپتال کے ڈاکٹر فاضل نعیم نے بتائی ہے۔

حماس کے قریبی ایک ذریعے نے میڈیا کو بتایا ہے کہ عسکری ونگ کے لوگوں کو حکم مل گیا ہے کہ جنگ بندی ختم ہونے کے بعد وہ بھی کارروائیاں شروع کر دیں اور غزہ کا دفاع کریں۔

دوسری جانب اسرائیلی فوج کا کا کہنا ہے جیسے ہی غزہ سے راکٹ فائر کیا گیا اس کے اس نے راکٹ روک کر حملے ناکام بنادیے۔ اسرائیلی وزیر اعظم کے دفتر کی طرف سے کہا گیا ہے کہ حماس نے جیسے ہی جنگ بندی کی خلاف ورزی شروع کو تو لڑائی پھر سے شروع ہو گئی۔

اسرائیل میں غزہ کے راکٹ حملوں کے شروع ہوتے ہی سائرن بجنا شروع ہو گئے اور اسرائیلی شہریوں نے بھاگ بھگ کر محفوظ جگہوں میں چھپنے کی کوشش شروع کر دی۔ اسرائیلی حکام کے مطابق سکولوں کے نزدیک حفاظتی انتظامات کو مزید بہتر کیا جارہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں