غزہ جنگ مہینوں میں نہیں ہفتوں میں ختم ہونی چاہیے:امریکا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اگرچہ امریکا نے ابھی تک غزہ میں مکمل جنگ بندی کا مطالبہ نہیں کیا ہے لیکن امریکی حکام نے اطلاع دی ہے کہ وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے گذشتہ ہفتے اسرائیلی جنگی حکومت کے عہدیداروں کو بتایا کہ بائیڈن انتظامیہ چاہتی ہے کہ غزہ میں جاری لڑائی مہینوں نہیں ہفتوں کے اندر ختم ہونی چاہیے۔

ہفتوں میں جنگ کا خاتمہ

امریکی اخبار ’وال سٹریٹ جرنل‘ کے مطابق حکام نے مزید کہا کہ سب کے ہاں یہ احساس ہے کہ یہ جنگ جتنی لمبی ہوگی، یہ سب کے لیے اتنی ہی مشکل ہوتی جائے گی۔

انہوں نےکہا کہ اسرائیلی حکام نے بلنکن کو زندگی معمول پر لانے میں دلچسپی کا اظہار کیا تاکہ اسرائیل کو معاشی دھچکا نہ لگے۔

تاہم انہوں نے سینیر امریکی اہلکار کو جنگ کی مدت کے بارے میں ضمانت فراہم نہیں کی۔

یہ بات ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب وائٹ ہاؤس کے قومی سلامتی کے مشیر جیک سلیوان نے بدھ کو اعلان کیا تھا کہ امریکا نے اسرائیل کے ساتھ غزہ میں فوجی کارروائیوں کے ٹائم ٹیبل پر بات چیت کی ہے۔

انہوں نے کہا کہ "ہم نے ان سے ٹائم لائنز کے بارے میں بات کی ہے۔ میں اس بات کو شیئر نہیں کرنا چاہتا کیونکہ اسرائیل نے پہلے ہی اپنے زمینی آپریشن کا نقشہ پہلے ہی بھیج دیا‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں