فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ میں جنگ کا تیسرا مرحلہ شروع ہے: اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی حکومت کے ترجمان ایلون لیوی نے اعلان کیا ہے کہ غزہ میں اسرائیلی فوج کی جنگ اب تیسرے مرحلے میں داخل ہو گئی ہے۔ ہم ہلاکتوں کی تعداد کو کم کرنے کے لیے ہر ممکن کوشش کر رہے ہیں۔ ترجمان نے اس امر کا اعلان بدھ کے روز تل ابیب میں ایک نیوز کانفرنس کے دوران کیا ہے۔

ترجمان نے کہا خان یونس کے علاقے کا سات اکتوبر کے حماس حملوں میں کلیدی کردار تھا ، اس لیے ہم دہشت گردی کے اس انفراسٹرکچر کو تباہ کرنے کی کوشش میں ہیں۔دہشت گردوں کا یہ انفراسٹرکچر شہری آبادی کے بیچوں بیچ زمین کے اوپر بھی ہے اور زمین کے نیچے بھی۔ اسرائیلی فوج اس وقت خان یونس کی آبادی کے اندر ہے۔

5 دسمبر 2023 کو جنوبی غزہ کی پٹی کے خان یونس میں اسرائیل اور حماس کے درمیان جاری تنازعہ کے درمیان خان یونس کے مشرق میں معن اسکول پر اسرائیلی حملوں کے بعد ایک زخمی فلسطینی کو ناصر اسپتال میں لایا گیا ہے۔
5 دسمبر 2023 کو جنوبی غزہ کی پٹی کے خان یونس میں اسرائیل اور حماس کے درمیان جاری تنازعہ کے درمیان خان یونس کے مشرق میں معن اسکول پر اسرائیلی حملوں کے بعد ایک زخمی فلسطینی کو ناصر اسپتال میں لایا گیا ہے۔

واضح رہے اسرائیل نے اپنی جنگ کا دائرہ جنوبی غزہ میں پھیلا دیا ہے۔اب تک لاکھوں فلسطینیوں کو بے گھر کیا جا چکا ہے، مزید کو بے گھر کرنے کی مہم کے طور پر بمباری اور محاصرہ دونوں جاری ہیں۔

جمعہ کے روز سے جنگ دوبارہ شروع ہونے سے انسانی بنیادوں پر کیا جانے والا امدادی کام رک چکا ہے۔ اور فلسطینیوں کی شہادتیں17 ویں ہزار کی گنتی میں داخل ہو چکی ہیں، جن میں 70 فیصد بچے اور عورتیں بھی شامل ہیں۔ 42000 سے زیادہ زخمی اس کے علاوہ ہیں۔

ایلون لیوی نے اس پس منظر میں اپنی تازہ نیوز کانفرنس میں کہا ۔ وزیر اعظم نیتن یاہو کا یہ ارادہ ہے کہ یرغمالیوں کو واپس لانے کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی۔ جو کچھ بھی بن پڑا کیا جائے گا۔'

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں