سعودی ولی عہد محمد بن سلمان نے ’القدیہ‘ شہر کا ماسٹر پلان جاری کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان نے القدیہ شہر کا ماسٹر پلان اور اس کا انٹرنیشنل برانڈ جاری کردیا۔

سعودی خبررساں ادرے ’ایس پی اے‘ کے مطابق شہزادہ محمد بن سلمان نے جو القدیہ انویسٹمنٹ کمپنی کے چیئرمین بھی ہیں کہا کہ القدیہ شہر مستقبل میں تفریحات، ثقافت اور کھیلوں کے شعبے میں دنیا کا نمایاں ترین شہر بن جائے گا

سعودی عرب کی معیشت پر اس کے خوشگوار اثرات مرتب ہوں گے اور اس کی بین الاقوامی حیثیت بھی اجاگر ہوگی۔ اس سے ریاض شہر کی حکمت عملی مستحکم ہوگی یہ ریاض کی معیشت کو فروغ دینے اور زندگی کا معیار بہتر بنانے میں معاون بنے گا۔ یہ پوری دنیا کے دس بڑے اقتصادی شہروں میں سے ایک ہوگا۔

سعودی ولی عہد نے کہا کہ القدیہ شہر میں سپیشل انویسمنٹ سعودی وژن 2030 کے بنیادی ستونوں میں سے ایک ہے۔

القدیہ شہر پبلک انویسٹمنٹ فنڈ کے بڑے منصوبوں میں سے ایک ہے یہ سعودی عرب کے سیاحتی اور اقتصادی اہداف کے فروغ میں بنیادی کردار ادا کرے گا۔

اس سے مقامی شہریوں اور سیاحوں کی زندگی کا معیار بہتر ہوگا۔ اس کی بدولت سعودی علاقائی اور بین الاقوامی سرمایہ کاروں کا رخ بڑھے گا۔ ریاض شہر کی پوزیشن مضبوط ہوگی۔

القدیہ شہر کے منصوبے پر کام شروع ہوچکا ہے اس کے تعمیراتی منصوبوں پر 10 ارب ریال لگائے جارہے ہیں۔

القدیہ برانڈ میں کئی عشروں کی ریسرچ کی بنیاد پر کھیل کے تصور کا انتخاب کیا ہے۔

القدیہ شہر میں کیا کچھ ہوگا؟

القدیہ شہر کا مقصد تفریحات، کھیلوں اور ثقافت کے شعبوں میں فرحت بخش تجربات کا موقع فراہم کرنا ہے۔ یہ شہر تین لاکھ ساٹھ ہزار مربع کلو میٹر کے رقبے پر تیار ہوگا ساٹھ ہزار عمارتیں ہوں گی چھ لاکھ سے زیادہ افراد اس کے باسی ہوں گے سوا تین لاکھ سے زیادہ روزگار کے مواقع فراہم ہوں گے اس سے مجموعی قومی پیداوار میں 135 ارب ریال کا اضافہ ہوگا۔

عالمی معیار کے سیاحتی مقامات اور منفرد قابل دید جگہیں دیکھنے کے لیے دنیا بھر سے لوگ آئیں گے(فوٹو، عرب نیوز)
عالمی معیار کے سیاحتی مقامات اور منفرد قابل دید جگہیں دیکھنے کے لیے دنیا بھر سے لوگ آئیں گے(فوٹو، عرب نیوز)

القدیہ شہر سالانہ 48 ملین افراد ک خیر مقدم کرے گا۔ یہاں عالمی معیار کے سیاحتی مقامات اور منفرد طرز کی قابل دید جگہیں دیکھنے کے لیے دنیا بھر سے لوگ آئیں گے۔

القدیہ شہر ریاض سٹی سینٹر سے چالیس منٹ کے فاصلے پر طویق پہاڑ کے قلب میں بنایا جارہا ہے۔ یہ منفرد ماحولیاتی اور قدرتی قابل دید مناظر سے آراستہ ہوگا۔ یہاں ای گیمز کا انٹرنیشنل ہیڈوکوارٹر ہوگا۔ سپورٹس کار زون ہوگا جبکہ فارمولا ون ریس ٹریک، دو گالف کورس ہوں گے فٹبال سٹی ہوگا یہاں دنیا کا سب سے بڑا اولمپک میوزیم ہوگا یہاں سکس فلیگز اور واٹر گیمز پارک بھی بنایا جائے گا آئندہ دو برسوں کے دوران اس کے ایک حصے کا افتتاح کردیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں