پیرا گلائیڈنگ کےعالمی چیمپیئن کا خواب دیکھنے والی سعودی نہال الہلال سے ملیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب کی کیپٹن نہال الھلال اپنے ایک خواب کو سچ کر دکھانے اور عالمی چیمپیئن بننے کے لیے دن رات محنت کررہی ہے۔

نہال الہلال کو مملکت کے آسمانوں پر اڑنا بہت پسند ہے۔ اسی شوق کو لے کر وہ پیرا گلائیڈنگ کی دنیا میں داخل ہوئی اور اب وہ اس میدان میں عالمی سطح پر اپنا نام بنانے اور ملک کا نام روشن کرنے کے لیے کوشاں ہے۔

نہال جازان یونیورسٹی میں "کنڈرگارٹن" کے شعبہ میں فیکلٹی ممبر کی حیثیت سے اپنی تعلیمی و تدریسی خدمات کے باوجود اپنے شوق کو عملی شکل دینے کے لیے جدو جہد کررہی ہے۔

کیپٹن نہال الہلال نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ مجھے ہوا بازی اس لیے پسند تھی کیونکہ یہ میری شخصیت کے ایک بڑے حصے کی آزادی، دریافت اور مہم جوئی سے محبت کی نمائندگی کرتا ہے۔ اس لیے کہ یہ ایک مخصوص کھیل ہے جس میں صرف وہی لوگ حصہ لے سکتے ہیں جو پرجوش ہوں۔ اس کھیل سے میں نے زندگی کے حالات کا سامنا کرنے کے لیے جذباتی توازن، سوچ بچار، دلیری، استقامت اور ہمت سیکھی۔

ایک کپتان پائلٹ کے پاس سب سے اہم ہنر کے بارے میں وہ کہتی ہیں کہ سیکھنے کی صلاحیت، ونگ کا زمینی کنٹرول، قوت فیصلہ، پرواز کے دوران کنٹرول اور محفوظ طریقے سے لینڈنگ کا ہنر اس میدان میں کامیابی کے لیے کسی بھی پیرا گلائیڈر کے لیے ضروری ہیں۔

ٹریننگ اوررکاوٹیں

پیراگلائیڈنگ کے اپنے شوق کی مشق کے دوران پیش آنے والی سب سے اہم رکاوٹوں کے بارے میں نہال کہتی ہیں کہ اپنی رہائش گاہ سے جبل ھدا کا محایل عسیر سے سفر، پہاڑ کی چوٹی پر چڑھنے کے لیے ٹیک آف کے علاقے تک نقل و حمل کی کمی، سعودی عرب میں اس کھیل کی مشق کے لیے تیار کردہ مقامات کی تعداد کی کمی بڑی مشکلات ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس کھیل کو پریکٹس کرنے کے لیے ٹریننگ کا دورانیہ ٹرینی کی مہارت پر منحصر ہے جو تقریباً دو ہفتوں سے لے کرایک ماہ تک ہوسکتا ہے۔

نہال اس کھیل میں دلچسپی رکھنے والوں کو مشورہ دیتی ہوئے کہتی ہیں کہ اس کھیل کو شروع کرنے کے مقصد متعین ہونا چاہیے۔ ایک قابل اعتماد ٹرینر کا انتخاب کرنا، تربیت کے مرحلے کے لیے وقت دینا، تسلسل اور عدم مداخلت، اور جسمانی اور مالی قابلیت ضروری ہے۔

دنیا کے آسمانوں میں اڑنے کا خواب

نہال الہلال نے اپنی گفتگو جاری رکھتے ہوئے کہا کہ مجھے اپنے والد کی طرف سے تعاون ملا اور میں نے متحدہ عرب امارات میں شرکت کرتے ہوئے السودہ، عقبہ السماء، کوہ ہدا، محایل عسیر اور مشہور طعس بدر کے آسمانوں پر پرواز کرنے کی مشق کی۔

شارجہ میں طعس الفایا کے مقام، کویت میں الوفرہ کے علاقے، سلطنت عمان میں ہوابازی کے ہیڈ کوارٹر،خبہ الجعدان، دربات آبشار کے اوپر پیرا گلائیڈنگ کی۔

انہوں نے ترکیہ، آذربائیجان، مصر، مراکش، یوکرین، البانیہ اور سلووینیا میں پیرا گلائیڈنگ میں بھی حصہ لیا اور مشق کی۔

نہال کا کہنا ہے کہ مجھے امید ہے کہ ایک دن میں عالمی چیمپئن شپ میں شرکت کروں گی۔ اپنے پیارے ملک کی بھرپور نمائندگی کروں گی اور خواتین کی ٹیم کولیڈ کروں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں