حزب اللہ کا حملہ اقوامِ متحدہ کی لبنان کی قرارداد کی خلاف ورزی ہے: اسرائیلی فوج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج کے ترجمان نے لبنان کی حزب اللہ کو سخت تنبیہہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر علاقے سے حملے جاری رکھے گئے تو لبنانی عوام کو "تباہ کن نتائج" کا سامنا کرنا پڑے گا۔

آئی ڈی ایف (اسرائیل ڈیفنس فورسز) کے ترجمان ریئر ایڈمرل ڈینیئل ہیگری نے کہا، "حزب اللہ اسرائیل کے خلاف اپنے حملوں میں اضافہ کر رہی ہے" اور اسرائیل نے "لبنان میں حزب اللہ کے ٹھکانوں پر حملے" کا جواب دیا ہے۔

ہیگری نے خبردار کیا، "جب تک کوئی سفارتی حل تلاش نہیں کیا جاتا اور اس پر عمل درآمد نہیں کیا جاتا، ہم اپنی سرحد سے خطرے کو دور کرنے کے لیے ضروری تیاری جاری رکھیں گے۔"

اسرائیل اور لبنان کی حزب اللہ اسرائیل-حماس جنگ شروع ہونے کے بعد سے تقریباً ہر روز سرحد پر فائرنگ کا تبادلہ کرتے ہیں اور ایران کے حمایت یافتہ دیگر مزاحمت کار گروپ شام اور عراق میں امریکی اہداف پر حملے کر چکے ہیں۔

ایران سے منسلک یمن کے حوثی باغیوں نے بحیرۂ احمر میں بحری جہازوں پر میزائلوں اور ڈرونز سے حملہ کیا ہے اور اسے اسرائیل کی ناکہ بندی کے طور پر پیش کیا ہے۔

امریکی دفاعی رہنما امید کر رہے ہیں کہ وہ مسلسل اعلیٰ سطح پر امریکی فوجی موجودگی اور ساتھ ہی اسرائیل پر زور دے کر کہ وہ اپنی کارروائیوں کو کم کرے، وسیع تر علاقائی تنازعات کے خطرے کو روکیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں