غزہ اور مغربی کنارے میں اب جنگ بند ہونی چاہیے: فلسطینی وزیراعظم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

فلسطینی وزیراعظم محمد اشتیہ نے آج سوموار کو کہا ہے اتھارٹی اب غزہ اور مغربی کنارے میں جنگ کو روکنا چاہتی ہے۔

آج ایک پریس کانفرنس میں انہوں نے عالمی برادری سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ فلسطینی ریاست کا اعلان کرنے کے لیے فوری طور پر پیش قدمی کرے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دنیا سے مطالبہ ہے کہ وہ فلسطین پراسرائیلی قبضے کے خاتمے کے لیے ایک ٹائم ٹیبل طے کرے"۔

انہوں نے کہا کہ اسرائیل ایک ایسی اتھارٹی چاہتا ہے جو شہداء کے اہل خانہ اور قیدیوں کو تنہا چھوڑ دے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ ہمارے بچے ہیں اور ہم اسرائیلی مشورے مسترد کرتے ہیں"۔

انہوں نے مزید کہا کہ غزہ میں موت، بھوک اور تباہی وبربادی جاری ہے۔

جنگ شروع ہونے کے بعد سے غزہ کی پٹی میں تقریباً 19,000 فلسطینی مارے جا چکے ہیں۔

موجودہ حالات میں جنگ بندی کے بین الاقوامی مطالبات میں اضافہ ہوا ہےاور امریکا سے جنگ میں اسرائیلی حکمت عملی کو تبدیل کرنے اور شہریوں کی جانوں کا تحفظ کرنے پر زور دیا ہے۔

فلسطینی وزیراعظم محمد اشتیہ نے زور دے کر کہا کہ اتھارٹی اسرائیل کے پاس موجود کلیئرنس فنڈز کی وصولی کے لیے بین الاقوامی اداروں کے ساتھ کام جاری رکھے ہوئے ہے۔

اسرائیلی وزیر خزانہ بزلئیل سموٹریچ نے اتوار کو کہا تھا کہ اسرائیلی حکومت رام اللہ میں فلسطینی اتھارٹی کو رقم منتقل نہیں کرے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں