فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ پر اسرائیلی بمباری میں مزید اموات، غرب اردن میں اسرائیلی فوج کے چھاپے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فلسطینی خبر رساں ایجنسی "وفا" نے پیر کے روز اطلاع دی ہے کہ اسرائیل نے غزہ پر اپنے شدید حملے جاری رکھے ہوئے ہیں۔ غزہ کے مختلف علاقوں میں اسرائیلی فوج کی تازہ بمباری میں مزید درجنوں شہری شہید اور زخمی ہو گئے ہیں۔

’وفا‘ نے صحت کے شعبے کے ذرائع کے حوالے سے بتایا کہ غزہ کے شمال میں واقع جبالیہ پر اسرائیلی بمباری میں 100 سے زائد شہری جن میں زیادہ تر خواتین اور بچے شامل ہیں شہید اور کم از کم 20 زخمی ہوگئے۔

خان یونس پر شدید بمباری

اسرائیلی جنگی طیاروں نے غزہ کے جنوب میں واقع شہر خان یونس کے شمالی علاقوں پر بھی پرتشدد حملے کیے جب کہ اسرائیلی توپ خانے کی بھاری گولہ باری سے شہر کے تمام علاقوں کو نشانہ بنایا گیا جس سے درجنوں شہری ہلاک اور زخمی ہوئے۔

غزہ کی پٹی کے وسطی علاقے میں بھی پرتشدد دھماکوں نے فضا کو ہلا کر رکھ دیا۔

العربیہ اور الحدث کے نامہ نگار نے اطلاع دی ہے کہ وسطی غزہ میں نصیرات کیمپ پر اسرائیلی حملوں میں درجنوں افراد مارے گئے۔

فلسطینی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق مغربی کنارے میں اسرائیلی افواج نے طوباس کے قریب الفارعی کیمپ پر حملہ کیا۔

ہزاروں اموات

قابل ذکر ہے کہ 7 اکتوبر کو حماس نے اچانک اسرائیل پر حملہ کرکے تقریباً 1200 اسرائیلیوں کو ہلاک اور تقریباً 240 افراد کو اغوا کر کے غزہ کی پٹی میں منتقل بھی کردیا تھا۔

اس کے بعد اسرائیل نے غزہ کی پٹی پر شدید بمباری اور 27 اکتوبر سے شروع ہونے والی زمینی کارروائی میں بدترین جارحیت کا مظاہرہ کیا۔ اسرائیل کی اب تک کی شدید بمباری میں تقریباً 19,000 فلسطینی شہید ہو چکے ہیں۔ ان میں 70 فیصد خواتین اور بچے شامل ہیں۔ اس کے علاوہ 52,000 فلسطینی زخمی ہوئے ہیں۔

نومبر کے آخر میں ایک ہفتے کی جنگ بندی میں غزہ سے 105 یرغمالیوں کو رہا کیا جن میں 80 اسرائیلی بھی شامل تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں