فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ کی سرحد کے پاس ایک بڑی سرنگ کی تلاش کرلی ہے۔ اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

حماس کے خلاف اڑھائی ماہ سے جنگ کرنے والی اسرائیلی فوج نے کہا ہے 'ایک غیر معمولی طور پر بڑی سرنگ کا پتہ چلا لیا گیا ہے۔ یہ سرنگ کنکریٹ اور لوہے کے گارڈروں سے بنی ہوئی ہے۔ یہ سرنگ غزہ سے بارڈر تک جانے کے لیے بنائی گئی تھی۔

اسرائیل فوج کو سینکڑوں کلومیٹرز پر پھیلی سرنگوں کو توڑنے پھوڑنے اور حماس کے بنائے ہوئے بنکرز کو تباہ کرنا ایک بڑے چیلنج کے طور پر نظرآتا ہے۔ کہ ان سرنگوں کو جنگجووں نے جنگی ضرورتوں کے لیے بنایا ہے۔

سات اکتوبر کو حماس نے ' ایریز ' نامی راہداری پر قبضہ بھی کیا تھا ، یہ فوجی چوکی سے 100 میٹر دور تھی۔ اسرائیلی فوجیوں نے ریت میں چھپے ہوئے ایک راستے کی نشان دہی کرتے ہوئے کہا یہ حماس کا ایک بڑا منصوبہ تھا۔ بتایا گیا ہے کہ یہ سرنگ پچاس میٹر کی گہرائی تک جاتی ہے اور اس سے آگے دس فٹ تک چوڑی ہے۔ سرنگ کے اندر بجلی کا نظام بھی موجود ہے۔

اسرائیلی فوجی ترجمان نے کہا اس سرنگ کی لمبائی چار کلومیڑ تک ہے اور یہ شمالی غزہ تک جاتی ہے جہاں پہلے حماس کی حکومت تھی۔ اور اب یہ تباہ کن جنگی علاقہ ہے۔'

تاہم فوجی ترجمان نے یہ نہیں بتایا کہ سات اکتوبر کے حملوں میں یہ سرنگ کام میں لائی گئی تھی یا نہیں۔ البتہ ترجمان نے کہا ' یہ سرنگ لاکھوں ڈالر کی رقم سے مکمل ہوئی ہوگی۔ '

مقبول خبریں اہم خبریں