مشرق وسطیٰ

دمشق پر اسرائیلی بمباری، ایرانی پاسداران انقلاب کے 11 اہلکار ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اسرائیل جس نے محض پانچ دن پہلے ایرانی پاسداران انقلاب کے سینیر کمانڈر رضی موسی کو شام میں بمباری کر کے ہلاک کیا تھا، جمعہ کے روز اسی طرح کی ایک اور بمباری کر کے پاسداران انقلاب کے مزید 11 اہلکاروں کو ہلاک کر دیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اسرائیلی بمبار طیاروں نے نشانہ ہی پاسداران انقلاب کا لیا تھا۔ یہ پاسدران انقلاب کے اہلکار ایرنی حمایت یافتہ عسکریت پسندوں سے متعلق امور تربیت کی ذمہ داری کے لیے شام میں تعینات تھے۔ جبکہ دمشق ائیر پورٹ پر اپنے سینئیر کے خیر مقدم کے لیے آئے تھے کہ اسرائیل نے بمباری کر دی۔

شام کے سرکاری ذرائع ابلاغ کا کہنا ہے شام کی وزارت دفاع نے اس سے قبل جنوبی شام اور دمشق کے نزدیک اسرائیلی بمباری کی اطلاع دی تھی۔

اسرائیل اپنے شام پر حملوں کو کم ہی زیر تبصرہ لاتا ہے تاہم اس نے کھلے لفظوں میں اعلان کر رکھا ہے کہ اپنے سب سے بڑے دشمن ایران کو شام میں بشار الاسد کی مدد کرنے کے لیے نہیں چھوڑے گا۔

شام سے متعلق برطانیہ میں قائم انسانی حقوق کی آبزرویٹری کے مطابق اسرائیلی بمباری کا ہدف ایک شامی دفاعی پوزیشن تھی، اسی طرح دمشق کے نزدیک اس کے نشانے پر ائیر پورٹ تھا۔ یاد رہے اس سے پہلے بھی اسرائیل اس ائیر پورٹ کو بارہا بمباری کا نشانہ بنا چکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں