امریکی بحری بیڑے جیرالڈ فورڈ کی بحیرہ روم سے امریکہ واپسی کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

امریکہ نے غزہ میں جنگ اور خطے کی صورت حال کے پیش نظر اپنے سب سے بڑے طیارہ بردار بحری بیڑے کو واپس امریکہ لے جانے کا اعلان کر دیا ہے ۔ یہ اعلان اتوار کے روز سامنے آیا۔

تاہم امریکی فوجی ترجمان نے کہا ہے اس بحری بیڑے کی واپسی کے بعد بھی امریکہ اس علاقے میں تباہ کن ہتھیاروں اور فوجی قوت کو برقرار رکھ سکھے گا۔

امریکہ کا سب سے بڑا جنگی اثاثہ جیرالڈ فورڈ طیارہ بردار سات اکتوبر سے شروع ہونے والی اسرائیل حماس جنگ جے فوری بعد امریکہ نے خطے میں اسرائیلی دفاع اور اپنے مفادات کے تفظ کے لئے بھیجا تھا لیکن اب اسے واپس بلا لیا گیا ہے اور جیرالڈ فورڈ اپنے بنیادی اور اصلی گھر نورفولک ورجینیا میں کچھ دیر رکے گا اور پھر اگلی منزلوں کی تیاری کرے گا۔

جیرالڈ فورڈ نے بحیرہ روم میں دو ماہ سے زیادہ عرصہ گذارا ہے۔ اسکی واپسی سے پہلے اسے حوثیوں کے حملوں سے پیدا شدہ صورت حال کا سامنا رہا ۔ اسکی وجہ سے سمندری ٹریفک کو کافی تحفظ ملا رہا۔

امریکہ کی طرف سے بحری بیڑہ واپس لے جانے کے اعلان کے باوجود کوئی متعین تاریخ نہیں دی ہے کہ بحری بیڑہ کب امریکہ پہنچے گا۔ تاہم اس سے آنے والے دنوں میں امریکی سٹریٹجی کی تبدیلی کا تاثر بن سکتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں