فوجی وردی میں اسرائیل کا دورہ، عراقی ملکہ حسن نے ایک طوفان کھڑا کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سابق مس عراق سارہ عیدان نے فوجی وردی پہن کر اسرائیل کا دورہ کرنے کے بعد سوشل میڈیا پر بڑے پیمانے پر غصے کو جنم دیا۔

عیدان نے اپنے انسٹاگرام پیج پر تصویریں پوسٹ کیں، جس میں غزہ کے ارد گرد بستیوں میں اسرائیلی فوجیوں کے ساتھ اپنی ملاقاتیں دکھائیں اور ان پر تبصرہ کرتے ہوئے لکھا کہ "آج میں نے کفار عزہ کا دورہ کیا۔ یہ وہ جگہ ہے جہاں حماس کی دراندازی کی وجہ سے دل دہلا دینے والا قتل عام اور دہشت گردی کا ارتکاب کیا گیا۔ حماس نے اپنے گھروں میں موجود بے گناہ اسرائیلی خاندانوں کی جانیں لے لی"۔

عیدان نے مزید کہا کہ "غزہ سے صرف ایک میل کے فاصلے پر ہم نے آئرن ڈوم کو حماس کی طرف سے داغے گئے راکٹوں کو فضا میں ناکارہ بناتے ہوئے دیکھا"۔

اس نے مزید کہا کہ "میں نفسیاتی طور پر تیار رہنے کے لیے عراق سے اپنی پرانی وردی لائی تھی، لیکن میں اب بھی صدمے میں ہوں اور اپنے آپ کو بیان کرنے سے قاصر ہوں۔ میں نے اپنی زندگی میں ایسی سفاکیت کبھی نہیں دیکھی، حتیٰ کہ داعش کی دہشت گردی میں بھی۔"

عراقی دوشیزہ کو تصاویر پر تبصروں میں سخت تنقید کا نشانہ بنایا گیا اور خاص طور پر اس کے عراقی فالورز نے اس پر کڑی تنقید کرتے ہوئے اسے ’اسرائیل نواز‘ قرار دیا۔

سارہ عیدان عراقی نژاد امریکی ماڈل اور موسیقار ہیں۔ اگرچہ وہ انسانی حقوق کی کارکن ہیں، لیکن انہوں نے 2017 میں اس وقت تنازعہ کھڑا کر دیا جب انہوں نے مس اسرائیل ایڈر گینڈلسمین کے ساتھ لاس وئگاس میں ہونے والے مس ورلڈ مقابلے کی تیاریوں کے ایک حصے کے طور پر اپنی ایک تصویر شائع کی۔

عیدان نے اسرائیلی چینل 12 کے ساتھ ایک انٹرویو میں کہا کہ ان کے اسرائیل کے دورے کا مقصد سوشل میڈیا پر ان کے فالورز کو سات اکتوبر کے واقعے کی حقیقت سے آگاہ کرنا ہے۔

کیلی فورنیا میں 30 ویں کانگریشنل ڈسٹرکٹ کی نمائندگی کرنے والی امیدوار نے کہا کہ مجھے متلی آتی ہے جب اس نے امریکی یونیورسٹیوں کے طالب علموں کو یہ کہتے ہوئے سنا کہ حماس کا حملہ اپنے دفاع کے لیے کیا گیا تھا۔

سارہ عیدان نے کہا کہ "میں چاہتی ہوں کہ وہ اس حد تک دیکھیں۔ وہ ظلم جس کی وجہ سے غزہ میں جنگ ہوئی، دنیا آزاد فلسطین کا نعرہ لگا رہی ہے۔ لیکن ایسا کبھی نہیں دیکھا کہ بے گناہ خاندانوں کا قتل کردیا جائے‘‘۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں