لبنان میں حزب اللہ کے ٹھکانوں پر اسرائیلی حملے میں چار مزاحمت کار جاں بحق: حزب اللہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

لبنان کے ایرانی حمایت یافتہ حزب اللہ گروپ نے پیر کو اپنے ٹیلی گرام اکاؤنٹ پر کہا کہ اس کے چار مزاحمت کار جنوبی لبنان میں شہید ہو گئے۔

بیان میں اس بارے میں کوئی تفصیل نہیں دی گئی کہ چاروں کیسے شہید ہوئے لیکن کہا گیا کہ وہ "یروشلم کی (آزادی) کی راہ میں شہید ہوئے تھے۔"

حزب اللہ نے ابتدائی طور پر کہا تھا کہ تین مزاحمت کار شہید ہوئے۔ بعد میں نئی اطلاع کے ساتھ یہ تعداد چار ہو گئی۔

سکیورٹی ذرائع نے بتایا کہ پہلے تین افراد سرحد کے قریب لبنانی گاؤں کفر کلی میں دو گھروں پر اسرائیلی حملے میں شہید ہوئے جہاں حزب اللہ کا سکیورٹی کنٹرول ہے۔

اکتوبر کے اوائل میں غزہ میں اسرائیل اور حماس کی جنگ شروع ہونے کے بعد سے لبنان کی جنوبی سرحد پر فلسطینی گروپ حماس کی اتحادی حزب اللہ اسرائیل کے ساتھ قریب قریب روزانہ فائرنگ کا تبادلہ کر رہی ہے۔

اسرائیلی فوج نے پیر کو کہا کہ اس نے لبنان میں متعدد اہداف کو نشانہ بنایا جن میں "فوجی مقامات" بھی شامل ہیں جہاں حزب اللہ کام کر رہی تھی۔

حزب اللہ اور سیکورٹی ذرائع کے مطابق اسرائیلی فضائی حملوں اور گولہ باری سے حزب اللہ کے 100 سے زائد مزاحمت کار اور تقریباً دو درجن شہری جاں بحق ہو چکے ہیں جن میں بچے، بوڑھے اور متعدد صحافی شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں