اسرائیلی بمباری میں العربیہ کے نامہ نگار کا بھائی اور خاندان کے کئی افراد جاں بحق

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

غزہ کی پٹی پر 92 دنوں کے دوران مسلسل اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں العربیہ کے نامہ نگار محمد عوض کے بھائی رامی عوض، ان کی اہلیہ اور بچے مارے گئے۔

یہ ہلاکتیں ان کے گھر پرہونے والے میزائل حملے میں ہوئی۔

اس سے پہلے نامہ نگار محمد عوض کے خاندان کے 3 افراد پیرکے روز وسطی غزہ کی پٹی میں نصیرات کیمپ پر حملے میں ہلاک ہوگئے تھے۔ ان میں ان کے کزن کی بیوی اور اس کے بچے بھی شامل تھے۔

عوض7 اکتوبر کے حملے کے نتیجے میں اسرائیلی بمباری کے آغازکے بعد سےغزہ کی پٹی میں زمین پر رونما ہونے والے واقعات کی کوریج کرتے ہیں۔

قابل ذکر ہے کہ عوض الشفاء میڈیکل کمپلیکس میں موجود تھے جب کہ اسرائیلی فوج نے اس کا محاصرہ کیا۔ انہوں نے وہاں سے رپورٹنگ کی۔

محصورغزہ کی پٹی میں فلسطینی وزارت صحت کے تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق ہلاکتوں کی تعداد 22 ہزار 600 تک پہنچ گئی ہے جب کہ اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں زخمی ہونے والوں کی تعداد 57 ہزار 910 تک پہنچ گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں