فلسطین اسرائیل تنازع

اسرائیلی فوج کی وحشیانہ کارروائی، فلسطینی کی لاش پر بکتر بند گاڑی چڑھادی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

مغربی کنارے کے شہر طولکرم میں شہید کیے گئے فلسطینی کی لاش کے اوپر اسرائیلی فوجیوں نے لاشعوری طور پر بکتر بند گاڑی چڑھانے کے وحشیانہ واقعے کو اسرائیلی فوج نے بلا ارادہ قرار دے دیا ہے۔

اسرائیلی فوج کے بیان میں کہا گیا ہے' ایسا بنا سوچے سمجھے اور بلا ارادہ کیا گیا ، تاہم اس واقعے کا جائزہ لیا جائے گا کہ یہ کیسے ہوا، ہمارے خیال میں لاش کوبکتر بندی گاڑی سے کچلنے کی فوٹیج پورے واقعے کی عکاسی نہیں کرتی ہے۔ '

اسرائیلی فوج کو یہ وضاحتی بیان اس وقت دینا پڑا جب اس مغربی کنارے میں ایک فوجی کارروائی کی فوٹیج وائرل ہو گئی۔ جس میں اسرائیلی فوج کے بے رحمانہ پن کو دکھایا گیا تھا کہ فلسطینیوں کو فائرنگ سے جاں بحق کرنے کے بعد ان میں سے ایک جاں بحق کیے گئے فلسطینی کی لاش کو بکتر بند گاڑی سے بڑے سکون سے کچل کر فلسطینیوں کو دہشت زدہ کررہی ہے۔

اسرائیلی فوج نے یہ وضاحت بدھ کے روز کی ہے۔ یہ سب کچھ فوجیوں نے بلا ارادہ کیا ہے۔ جبکہ یہ وحشیانہ کارروائی پیر کے روز کی گئی تھی۔ اگر یہ ویڈیو وائرل نہ ہوتی تو اس بارے میں بلا ارادہ غیر انسانی کارروائی فوجی کارروائی کے بعد بھی یہ معاملہ بلا تبصرہ ہی رہتا۔ یہ فوٹیج سیکیورٹی کیمرے سے بنائی گئی تھی۔

ادھر مغربی کنارے میں وحشیانہ جرم کے حوالے سے فلسطینی حکام اسرائیلی فوج کو ذمہ دار قرار دیا ہے۔ طولکرم میں پیر کی رات ایک فلسطینی کی لاش کو اسرائیلی فوجی بکتر بند گاڑی کس طرح کچل رہے ہیں۔

اسرائیلی فوج نے اپنے بیان میں مزید کہا ' اس نے تین فلسطینیوں کو ایک دہشت گردانہ مقابلے میں ہلاک کیا تھا۔ یہ دہشت گردانہ مقابلہ ایک مطلوب فلسطینی کی تلاش کے دوران کیا گیا۔

ایک اور فوٹیج میں دکھایا گیا ہے کہ ایک عمارت سے کچھ لوگ نکل کر بھاگ رہے ہیں۔ جن میں سے تین کو فوجی فائرنگ سے ہلاک کر دیا گیا۔

اب اسرائیلی فوج نے اس بہیمانہ واقعے کی شہرت پھیلنے کے بعد ویڈیو کا جائزہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ کیونکہ اس فوٹیج میں بکتر بند گاڑی بڑے سکون کے ساتھ فلسطینی کی لاش پر چڑھائی جاتی ہے ، پھر روک پر چلائی جاتی ہے اور بکتر بند کے پچھلی جانب کے پہیوں سے لاش کو کچل دیا جاتا ہے۔

واضح رہے مغربی کنارے میں فلسطینی آبادی تین ملین کے قریب ہے۔ جو مختلف شہروں ، قصبوں اور دیہات میں رہتی ہے۔ مغربی کنارے پر اسرائیل کا ناجائز 1967 سے قبضہ چل رہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں