ایران بحیرہ احمر سے بحیرہ روم تک بحرانوں کو ہوا دے رہا ہے: برطانیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانوی وزیر دفاع گریس شیپس نے زور دے کر کہا ہے کہ ان کی افواج نے بحیرہ احمر میں تجارتی جہازوں کے تحفظ میں قائدانہ کردار ادا کیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایران بحیرہ احمر سے بحیرہ روم تک بحرانوں کو ہوا دے رہا ہے۔

برطانوی وزی دفاع کا یہ بیان ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب دوسری جانب برطانیہ نے کہا گیا کہ برطانیہ حوثیوں پر گذشتہ جمعہ کے روز کیے گئے حملوں کے اثرات کا جائزہ لے رہا ہے جس کے بعد نئے حملوں کا فیصلہ کیا جائےگا۔

ایران کی طرف سے خطرات لاحق

برطانوی وزیر دفاع نے ’ایکس‘پلیٹ فارم پر اپنے اکاؤنٹ کے ذریعے پر پوسٹ کردہ ایک بیان میں کہا کہ ایرانی پراکیسز بحیرہ احمر سے بحیرہ روم تک بحرانوں کو ہوا دے کر خطرہ پیدا کررہی ہیں۔

ان کا اشارہ بحیرہ احمر میں شپنگ لائن پر یمن کے ایران نواز حوثی عسکریت پسندوں کے حملے کی طرف تھا۔

انہوں نے کہا کہ ایران ایک خطرے کی نمائندگی کرتا ہے کیونکہ وہ جوہری ہتھیار حاصل کرنا چاہتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ بین الاقوامی تجارت دہشت گردی کا ہدف بن چکی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ملیشیاؤں کی سرگرمیاں عالمی امن کے لیے خطرہ ہیں اور اسلحے کے لیے عالمی مقابلہ بہت بڑے خطرات کی نشاندہی کرتا ہے۔

برطانوی وزیر دفاع نے خبردار کیا کہ دُنیا مزید خطرناک مرحلے کی طرف بڑھ رہی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں