فلسطین اسرائیل تنازع

خان یونس ،اسرائیلی فوج کے ایک بار پھر غزہ میں ہسپتال پر بھی حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

غزہ میں وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اسرائیلی فوج کے ٹینکوں نے الناصر ہسپتال پر گولہ باری کی ہے۔ وزارت صحت کی طرف سے منگل کے روز بتایا گیا ہے کہ اسرائیلی فوج نے جنوبی غزہ میں خان یونس کے ایک ہسپتال پر براہ راست فائرنگ اور گولہ باری کی ہے۔ اس دوران شدید لڑائی کے دوران شہری پھنس کر رہ گئے اور گولہ باری کا نشانہ بنائے جاتے رہے۔

وزارت کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ "اسرائیلی ٹینک خصوصی سرجری کی عمارت اور الناصر ہسپتال کی ہنگامی عمارت کی بالائی منزلوں پر شدید فائرنگ کرتے رہے، جس کے نتیجے میں درجنوں افراد کے زخمی ہوگئے۔

'اے ایف پی' کی طرف سے ہسپتال پر فائرنگ اور حملے کے بارے میں پوچھے جانے پر اسرائیلی فوج نے فوری طور پر کوئی جواب نہیں دیا۔

تاہم کافی دیر تک خان یونس کا علاقہ فلسطینی عسکریت پسندوں اور اسرائیلی فوج کے درمیان لڑائی کا مرکز بنا رہا ہے، اسرائیلی فوج نے اپنی زمینی کارروائی کے تقریباً تین ماہ کے دوران آج کل جنوبی غزہ کو دبایا ہوا ہے۔ فلسطینی پناہ گزینوں کے لیے اقوام متحدہ کے ادارے نے کہا ہے کہ اس کی قائم کردہ خان یونس پیر کو فوجی کارروائیوں کے دوران متاثر ہوا، اس کے ارد گرد شدید لڑائی کے دوران کم از کم چھ بے گھر افراد ہلاک اور بہت سے زخمی ہوئے۔

'اونروا' کے سربراہ فلپ لازارینی نے منگل کو سوشل میڈیا پلیٹ فارم' ایکس ' پر لکھا ۔ جیسے ہی اسرائیلی فوجیوں کا دباؤ بڑھ رہا ہے، اب دس لاکھ سے زیادہ لوگ خان یونس کے جنوب میں رفح جانے پر مجبور ہیں۔جو مصر کی سرحد سےقریب ہے۔

اقوام متحدہ کے انسانی ہمدردی کے ادارے نے منگل کو غزہ میں ناقابل بیان درد کا ذکر کیا جہاں ہلاکتوں کی تعداد بے قابو ہو کر بڑھ رہی ہے۔

خان یونس میں لڑائی بڑھ رہی ہے، شہری علاقوں کو تباہ کیا جا رہا ہے اور فلسطینیوں کے ان کی بیوی بچوں سمیت سب مسلسل نشانے پر ہیں۔ حتی کہ صحت کی دیکھ بھال والے ہسپتالوں تک کوتباہ کن حملوں سے نشنہ بنایا گیا یے

اقوام متحدہ کے 'اوچا' نامی ادارے کی طرف سے کہا گیاہے کہ حماس کے زیر انتظام غزہ کی وزارت صحت کے تازہ ترین اعداد و شمار کے مطابق، غزہ میں جاری جنگ کے دوران کم از کم 25,490 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، جن میں زیادہ تر خواتین اور بچے ہیں۔

اسرائیلی سرکاری اعداد و شمار پر مبنی اے ایف پی کے مطابق، جنگ حماس کے 7 اکتوبر سے اسرائیل میں تقریباً 1,140 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں