فلسطین اسرائیل تنازع

آئی سی جےکیس کے تناظرمیں جنوبی افریقہ کاروٹ معطل کردیا گیا ہے:العال اسرائیل ایئرلائنز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جنوبی افریقہ کی جانب سے عالمی عدالت میں اسرائیل پر نسل کشی کے الزام کے بعد العال اسرائیل ایئر لائنز نے طلب میں زبردست کمی کا حوالہ دیتے ہوئے جمعہ کے روز کہا کہ وہ مارچ کے آخر میں اپنا جوہانسبرگ کا روٹ معطل کر رہی ہے۔

اسرائیل کا پرچم بردار جہاز جوہانسبرگ کے لیے ہفتہ وار دو بار نان اسٹاپ پرواز کرتا ہے۔

العال کے ترجمان نے کہا، "اسرائیلی جنوبی افریقہ کے لیے پرواز نہیں کرنا چاہتے۔ وہ پروازیں منسوخ کر رہے ہیں اور ہوائی جہاز کافی خالی ہیں۔ ہم سمجھتے ہیں کہ یہ صورتِ حال ہے کیونکہ یہ پہلے مختلف تھی۔"

انہوں نے کہا اس حقیقت نے کہ اسرائیلی جنوبی افریقہ نہیں لیکن دوسری جگہوں پر جانا چاہتے ہیں، ہمیں یہ فیصلہ کرنے میں مدد ملتی ہے کہ ہم اس روٹ کو روک رہے ہیں۔ کمپنی نے موجودہ سکیورٹی صورتحال کا بھی حوالہ دیا۔

اقوامِ متحدہ کے جج جمعہ کو اسرائیل کے خلاف ہنگامی اقدامات کے لیے جنوبی افریقہ کی درخواست پر فیصلہ سنائیں گے جس میں یہ بھی شامل ہے کہ وہ غزہ میں اپنی فوجی کارروائیاں روک دے جس پر اسے عالمی عدالت میں ریاستی قیادت میں نسل کشی کے الزامات کا سامنا ہے۔

7 اکتوبر کو حماس کے اسرائیل پر حملے میں 1,200 اسرائیلی ہلاک اور 240 سے زیادہ افراد کو اغوا کیا گیا تھا جس کے بعد اسرائیل نے حماس کے زیرِ اقتدار غزہ میں شدید ردِعمل کا اظہار کیا۔ غزہ کے محکمۂ صحت کے حکام کے مطابق 26,000 سے زیادہ افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔

اسرائیل نے عدالت سے کیس کو یکسر مسترد کرنے کا کہا ہے۔ جمعرات کے روز اسرائیلی حکومت کے ایک ترجمان نے کہا انہیں توقع ہے کہ اقوامِ متحدہ کی اعلیٰ عدالت "ان جعلی اور مخصوص الزامات کو خارج کر دے گی۔"

جنوبی افریقہ نے دو ہفتے قبل دلیل دی تھی کہ اسرائیل کی فضائی اور زمینی کارروائی کا مقصد غزہ کی "آبادی کی تباہی" ہے۔

العال نے کہا کہ ایک بار جب اس نے جوہانسبرگ کے لیے پرواز بند کر دی تو وہ اس روٹ پر استعمال ہونے والے وائیڈ باڈی طیارے کو منتقل کر دے گا تاکہ نئے راستوں کی جانچ کے دوران موجودہ منزلوں کو شمالی امریکہ اور ایشیا میں بنکاک اور ٹوکیو تک پھیلایا جا سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں