فلسطین اسرائیل تنازع

غزہ میں امدادی سامان کی فراہمی کے لیے ' ڈونر ملک ' امداد جاری رکھیں: انتونیو گوتریس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتونیو گوتریس نے ایک بار پھر کارکن ممالک پر بالعموم اور 'ڈونر ملکوں' پر بالخصوص زور دیا ہے کہ وہ غزہ میں جاری امدادی کارروائیوں کے لیے اپنی امداد اور فنڈز کا سلسلہ جاری رکھیں۔ انہوں نے یہ اپیل اتوار کے روز اس یقین دہانی کے ساتھ کی ہے کہ 'اونروا' کے اہلکاروں پر لگائے گئے الزام کی غیر جانبدارانہ تحقیقات کرائی جائیں گی۔ تاکہ معلوم ہوسکے کہ الزام کس قدر حقیقت پر مبنی ہے اور اس کی روشنی میں کاروائی کی جاسکے۔

اقوام متحدہ کے سیکٹری جنرل انتونیو نے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ 'اگر کوئی اقوام متحدہ کا کارکن اس میں ملوث ہوا تو اس کا مکمل احتساب کیا جائے گا۔ حتی کہ ضرورت کے مطابق فوجداری مقدمات سے بھی گزارا جائے گا۔ اقوام متحدہ کا سیکٹریٹ ان تحقیقات کے سلسلے میں متعلقہ حکام کے ساتھ مکمل تعاون کرے گا۔

اسی موقع پر انہوں نے مزید کہا کہ دسیوں ہزار لوگ 'اونروا' میں کام کرتے ہیں۔ جن میں سے ایک بڑی تعداد انسانی حقوق کے لیے کام کرتے ہوئے سخت مشکلات سے دوچار ہے اس کے لیے چند افراد پر لگنے والے الزامات کی وجہ سے پورے 'اونروا' اور اس کے تمام کارکنوں کو سزا نہیں دے سکتے۔ جو بھوکے اور برے حال کو پہنچے ہوئے لوگوں کی مدد کر رہے ہین اور ان لوگوں کی بنیادی ضرورت کی چیزیں انہیں ضرور ملنی چاہئے۔

یو این چیف نے پہلی باراس معاملے میں اپنے تفصیلی تبصرے میں کہا ہے 'اونروا' کے بارہ کارکنوں پر الزام لگایا گیا ہے جن میں سے نو کی ملازمت کی ختم کردی گئی ہے جبکہ ایک ہلاک ہوچکا ہے اور باقی دو کی تلاش اور شناخت کا عمل جاری ہے۔

امریکہ کی پیروی کرتے ہوئے برطانیہ، جرمنی، اٹلی، ہالینڈ، سوئٹزرلینڈ، فن لینڈ اور آسٹریلیا اور کینیڈا نے بھی 'اونروا' کو دیے جانے والے فنڈز کو روک دیا ہے۔ اسرائیل کی طرف سے 'اونروا' پر لگائے گئے اس الزام کے بعد غزہ میں امدادی کاروائیوں پر منفی اثر پڑسکتا ہے۔

سیکٹری جنرل نے کہا کہ میں ان ممالک کی اس تشویش کو سمجھ سکتا ہوں ان الزامات سے میں خود بھی خوفزدہ ہوا۔ میں ان ممالک سے جنہوں نے اونروا کیے لیے فنڈز کو روکا ہے سے اپیل کرتا ہوں اور اس بات کی ضمانت دیتا ہوں کہ 'اونروا' کی امدادی خدمات جاری رہیں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں