شرقِ اوسط میں امریکی کارروائی ’متناسب‘ ہے: آسٹریلوی وزیرِ اعظم البانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

آسٹریلیا کے وزیر اعظم انتھونی البانی نے کہا کہ ہفتے کے آخر میں شرقِ اوسط میں امریکی فوجی کارروائی متناسب رہی ہے اور انہوں نے اسرائیل اور فلسطین کے لیے دو ریاستی حل کے لیے حمایت کا اعادہ کیا۔

امریکی افواج نے ہفتے کے روز یمن میں ایران کے حمایت یافتہ حوثی باغیوں کے خلاف حملوں کے ایک نئے دور کے ساتھ شام اور عراق پر حملے کیا۔ اتوار کو آسٹریلیا، بحرین، کینیڈا، ڈنمارک، نیدرلینڈز اور نیوزی لینڈ کی جانب سے جاری کردہ مشترکہ بیان میں یمن کے 13 مقامات پر 36 اہداف پر حملوں کی حمایت کی گئی۔

البانی نے آسٹریلیائی نشریاتی ادارے اے بی سی کے ساتھ ایک ٹیلی ویژن انٹرویو میں کہا، "ہم ریاست ہائے متحدہ کے اقدامات کی حمایت کرتے ہیں۔ یہ متناسب ہیں، یہ ایران کی حمایت یافتہ تنظیموں کی کارروائیوں کا بدلہ ہے اور یہ کشیدگی میں کوئی اضافہ نہیں ہیں۔ اس لیے ہم سمجھتے ہیں کہ امریکہ نے درست کیا ہے۔"

البانی نے دو ریاستی حل کے لیے آسٹریلیا کی حمایت کا اعادہ کیا جو "محفوظ سرحدوں کے اندر اسرائیل کے وجود کے حق" اور "فلسطینیوں کے لیے انصاف" کی حمایت کرے۔

البانی نے کہا، "ہم خطے میں سیاسی حل کی حمایت کرتے ہیں اور یہ ضروری ہے کہ بین الاقوامی برادری اپنا کردار ادا کرے۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں