ایرانی گیس پائپ لائن پر دہشت گردانہ حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایران میں گیس پائپ لائن کو اڑانے کے لئے دہشت گردوں نے دھماکے کئے ہیں۔ سرکاری ذرائع ابلاغ کے مطابق یہ دھماکے مختلف شہروں میں بدھ کی رات کے ایک بجے کیے گئے ہیں۔

دھماکوں کے نتیجے میں گیس پائپ لائن گیس کی ترسیل رک گئی۔ بتایا گیا ہے کہ تین صوبوں کے درمیان متنازعہ گیس پائپ لائن ہے۔

نصف شب کو کی جانے والی یہ دہشت گردانہ کارروائیاں دو مختلف مقامات پر کی گئی ہیں ۔ جن کا نشانہ گیس پائپ لائن کو بنا نا مقصود تھا۔

ایرانی قومج گیس کمپنی کے مینیجر سعید عاقلی کے مطابق گیس پائپ لائن کو جنوب مغربی شہر بورجان شہر ، بختیاری اور صفا شہر میں نقصان کا شکار ہوئیں، تاہم کوئی جانی نقصان رپورٹ نہیں کیا گیا یے۔

سعید عاقلی نے کہا ' ان دھماکوں کے نتیجے میں کم از کم تین صوبوں میں گیس کی سپلائی متاثر ہوئی۔ان صوبوں میں شمالی خراسان، اور زنجان کے شہر بھی شامل ہیں۔ تاہم فوری طور پر کسی دہشت گرد گروپ نے ان دھماکوں کی ذمہ داری قبول نہیں کی ہے۔

واضح رہے ایران اپنے ہاں اس طرح کے دہشت گردانہ واقعات کی ذمہ داری عام طور پر اسرائیل عاید کی جاتی رہی ہے۔ کیونکہ ایران نے مسئلہ فلسطین کو اپنی خارجہ پالیسی کا محور بنا رکھا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں