اسرائیل کا درعا میں شامی فوج کے اسلحہ ڈپو کو تباہ کرنے کا دعویٰ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج نے شام کے شہر درعا میں شامی فوج کے ایک اسلحہ ڈپو کو تباہ کرنے کا دعوٰی کیا ہے۔

اسرائیلی فوج جو شام میں کارروائیوں کے بارے میں کم ہی اعتراف کرتی ہے نے ہفتے کے روز ایک بیان میں کہا کہ شمالی درعا کے مضافاتی علاقے محجہ میں شامی فوج کے ایک اسلحہ گودام کو نشانہ بنایا۔

گولان پہاڑیوں پر حملے کا جواب

اسرائیلی فوج نے ایک بیان میں مزید کہا کہ یہ حملہ گولان کی پہاڑیوں کی طرف شام سے گولہ باری کے منبع کی نشاندہی کے بعد کیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ "توپ خانے نے فائرنگ کے منبع پر گولہ باری کی اور جنگی طیاروں نے محجہ کے علاقے میں شامی فوج سے تعلق رکھنے والے ہتھیاروں کے ذخیرے پر حملہ کیا"۔

قبل ازیں سیریئن آبزرویٹری فار ہیومن رائٹس نے کہا ہے کہ جمعہ کی شام اسرائیل نے گولان پر مسلح گروپوں کے میزائل فائر کرنے کے جواب میں درعا کے دیہی علاقوں میں متعدد مقامات پر بمباری کی۔

آبزرویٹری نے اطلاع دی ہے کہ درعا کے مغربی دیہی علاقوں میں لبنانی حزب اللہ کے وفادار مسلح گروپوں نے کاتیوشا راکٹوں سے گولان میں اسرائیلی فوج کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں